مہمندایجنسی ، سرحد پار سے چیک پوسٹوں پر حملے ، جوابی کارروائی میں 5دہشتگرد ہلاک

مہمندایجنسی ، سرحد پار سے چیک پوسٹوں پر حملے ، جوابی کارروائی میں 5دہشتگرد ...

 مہمند ایجنسی (نمائندہ پاکستان) مہمند ایجنسی، پاک افغان سرحدی علاقہ خویزئی بائیزئی سب ڈویژن میں افغانستان کی طرف سے پاکستانی پوسٹوں پر دہشت گردوں کے حملے۔ سیکورٹی فورسز کی بھر پور جوابی کاروائی سے حملہ آور پسپا۔ سرکاری ذرائع کے مطابق جوابی کاروائی میں 5 حملہ آور مارے گئے۔ متعدد زخمی۔ سوران درہ میں بارودی سرنگ دھماکے میں ایک سکیورٹی اہلکار جاں بحق ایک زخمی۔ تحصیل امبار میں برساتی نالے سے 2 لاشیں برآمد۔ مختلف علاقوں میں سیکورٹی فورسز کا سرچ آپریشن جاریمہمند ایجنسی میں سرکاری ذرائع کے مطابق ہفتے اور اتوار کے درمیانی رات مہمند ایجنسی بائیزئی سب ڈویژن میں پاک افغان سرحد میں قائم پاکستانی چوکیوں پر رات کی تاریکی میں افغا نستان کی طرف سے دہشت گردوں نے ہلکے اور بھاری ہتھیاروں سے حملہ کر دیا۔ جس پر سیکورٹی فورسز نے فوری جوابی کاروائی شروع کر کے حملہ آوروں پر گولہ باری اور فائرنگ کا سلسلہ جاری رکھا۔ جس سے حملہ پسپا کر دیا گیا۔ سیکورٹی ذرائع کے مطابق جوابی کاروائی میں 5 حملہ آور مارے گئے اور متعدد زخمی ہو گئے۔ سیکورٹی فورسز کی موثر کاروائی کے نتیجے میں حملہ آور افغانستان کی طرف پسپا ہو گئے۔ جبکہ اتوار کے روز بائیزئی سب ڈویژن کے علاقہ سوران درہ میں بارودی سرنگ دھماکے کے نتیجے میں ایک سیکورٹی اہلکار جاں بحق جبکہ ایک زخمی ہو گیا ہے۔ دوسری طرف میڈیا رپورٹس کے مطابق واقعات کی ذمہ داری کالعدم ٹی ٹی پی جماعت الاحرار نے قبول کر لی ہے۔ علاوہ ازیں تحصیل امبار میں ایک برساتی نالے سے 2 نامعلوم افراد کی لاشیں ملی ہے۔ جنہیں شناخت کیلئے غلنئی منتقل کر دیا گیا ہے۔ جبکہ دویزئی سمیت مختلف علاقوں میں سیکورٹی فورسز کا سرچ آپریشن جاری ہے۔ اور مہمند ایجنسی کے پولیٹیکل انتظامیہ نے ایجنسی بھر میں تا حکم ثانی موٹر سائیکل چلانے پر پابندی لگا دی ہے۔

مزید : پشاورصفحہ اول