میاں غنڈی کے رہائشی دو بھائی انتہائی پراسرار بیماری میں مبتلا،ڈاکٹرز بھی سر پکڑ کر بیٹھ گئے

میاں غنڈی کے رہائشی دو بھائی انتہائی پراسرار بیماری میں مبتلا،ڈاکٹرز بھی سر ...
میاں غنڈی کے رہائشی دو بھائی انتہائی پراسرار بیماری میں مبتلا،ڈاکٹرز بھی سر پکڑ کر بیٹھ گئے

  

کوئٹہ (مانیٹرنگ ڈیسک)کوئٹہ کے علاقے میاں غنڈی میں دو بھائی ایسے ہیں جو کہ سورج کی روشنی میں چاک و چوبند رہتے ہیں اور جیسے جیسے شامل ڈھلتی ہے ان کا جسم بھی حرکت کرنا بند کر دیتاہے ۔

تفصیلات کے مطابق شعیب اور رشید میاں غنڈی کے رہائشی ہیں جوکہ دن نکلنے پر اپنے کام شروع کر تے ہیں اور شام ڈھلنے سے قبل ہی گھر لوٹ آتے ہیں کیونکہ سورج کے ڈھلنے کے ساتھ ہی ان کے جسم حرکت کرنا بند کر دیتے ہیں جس کی وجہ سے وہ کھانے پینے کے علاوہ کوئی اور کام بھی نہیں کرسکتے ۔دونوں نے جسموں پر بیماری کے اثرات تو نظر آتے ہیں لیکن ڈاکٹرز کو سمجھ ہی نہیں آتی ان دونوں معصوم بچوں کو بیماری کیاہے ۔محنت کش نے اپنے بچوں کا علاج کروانے کیلئے کوشش بھی کی لیکن ڈاکٹرز بیماری کو سمجھنے سے قاصر ہیں ۔وزیر مملکت برائے صحت سائرہ افضل تارڑ نے تینوں بچوں کا مکمل چیک اور علاج پمز ہسپتال سے کروانے کا اعلان کر دیاہے ۔

مزید : کوئٹہ