باجوڑ میں خوردونوش پر ٹیکس کے خاتمہ پر عملدر آمد کا آغاز

باجوڑ میں خوردونوش پر ٹیکس کے خاتمہ پر عملدر آمد کا آغاز

  



باجوڑ ایجنسی ( نمائندہ پاکستان )باجوڑ میں پولیٹیکل انتظامیہ اشیائے خوردونوش پر ٹیکس خاتمے کے اعلان پر عمل درآمد ۔فرہاد علی چیئرمین اے ۔ایف ۔ایس اوگورنر خیبر پختونخوا کا قبائل پر ٹیکس خاتمے کے اعلان پر فوری عمل درآمد شروع کیا جائے ان خیالات کا اظہار آل فاٹا سٹوڈنٹس فورم کے چیئرمین فرہاد علی نے باجوڑ پریس کلب میں ایک پرہجوم پریس کانفرنس سے اپنے خطاب کے دوران کیا اُنہوں نے کہا کہ فاٹاکے عوام بد امنی اور آپریشن کیوجہ سے دربدر ہوگئے ان کے تجارتی مراکز مکانات ،سڑکیں ،تعلیمی ادارے ،صحت کے مراکز حتی کہ پورا انفرسٹرکچر تباہ حال ہیں شدید بد حالی کیوجہ سے قبائل خطے میں خط غربت سے نیچے زندگی گزار رہے ہیں اُنہوں نے گورنر خیبر پختونخو اکے فاٹا میں خواراکی اشیاء پر ٹیکس خاتمے کے اعلان کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ یہ اقدام پورے قبائل کیلئے باعث مسرت ہیں لیکن باجوڑ ایجنسی میں پولیٹیکل انتظامیہ نے گورنر خیبر پختونخوا کے احکامات کے کھلی خلاف ورزی کرکے تاحال اس پر عمل درآمد شروع نہیں کیا اُنہوں نے کہا کہ قبائل پر مسلط کردہ نظام کیوجہ سے مختلف تحریکیں جنم لی رہی ہیں جو اس نظام کے خلاف رد عمل کے طور پر سامنے آرہے ہیں قبائل کو حکمران سینے سے لگا کر ان کو بنیادی ضروریات زندگی فراہم کریں اُنہوں نے دھمکی دیتے ہوئے کہا کہ اگر ایجنسی میں گورنر کے پی کے کے اعلان پر عمل درآمد نہیں کیا گیا تو فاٹا کے نوجوان گورنر پاؤس کے سامنے تادم مرگ بھوک ہڑتال پر مجبور ہونگے پریس کانفرنس میں عبد الواجد ،امجد علی ،سجاد احمد ،ابوبکر شاہ سمیت دیگر طلباء تنظیموں کے نمائندے بھی موجود تھے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...