ورکرز ویلفیئر بورڈ رٹ ،صوبائی حکومت نے جواب داخل کردیا

ورکرز ویلفیئر بورڈ رٹ ،صوبائی حکومت نے جواب داخل کردیا

  



پشاور(نیوزرپورٹر)ورکرزویلفیئربورڈ کے ڈائریکٹرورکس نعمت اللہ گنڈاپورکی پشاورہائی کورٹ میں زیرسماعت رٹ میں صوبائی حکومت نے جواب داخل کردیاہے جس میں موقف اختیار کیاگیاہے کہ درخواست گذارنعمت اللہ گنڈاپورکو سیکرٹری ورکرزویلفیئربورڈ اس لئے تعینات نہیں کیاجاسکتاکیونکہ سیکرٹری کی انتظامی پوسٹ ہے جبکہ درخواست گذارکاتعلق انجینئرنگ کیڈرسے ہے اورسیکرٹری کی تعیناتی کے لئے باقاعدہ قواعدوضوابط ہیں درخواست گذارنعمت اللہ گنڈاپور اوران رولزکے تحت درخواست گذار کی تعیناتی نہیں ہوسکتی کیونکہ اس کے لئے ماسٹران کامرس یابزنس ایڈمنسٹریشن یالاء کاہوناضروری ہے جبکہ درخواست گذارڈی جی ورکس کی پوسٹ پرجائے گالہذادرخواست گذار کی رٹ ناقابل سماعت ہے لہذااسے خارج کی جائے دوسری جانب محمدشعیب نے درخواست دائرکی ہے کہ اس میں اسے فریق بنایاجائے کیونکہ وہ انتظامی کیڈرکاسینئرترین ا فسرہے لہذااسے فریق بنایاجائے جبکہ درخواست گذار نعمت اللہ گنڈاپور نے اپنی پیدائش کی تاریخوں میں بھی ردوبدل کیاہے جس کے تحت وہ یکم مئی کو ریٹائرہوجائے گااس بناء وہ ریٹائرمنٹ سے بچنے کے لئے عدالت کاسہارالیناچاہتاہے لہذااس کی رٹ خارج کی جائے عدالت عالیہ کادورکنی بنچ جمعرات کے روز رٹ اورداخل کردہ جواب کی سماعت کرے گا واضح رہے کہ نعمت ا للہ گنڈاپورنے اپنی رٹ میں موقف اختیار کیاہے کہ وہ گریڈ19کاافسرہے اوراسے سیکرٹری تعینات کیاجائے کیونکہ درخواست گذار 2015میں سیکرٹری تھاتاہم اسے غیرقانونی طورپر ہٹادیاگیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...