کراچی ،گرین کریسنٹ ٹرسٹ کا چیئرٹی ڈنر 27اپریل کو ہوگا

کراچی ،گرین کریسنٹ ٹرسٹ کا چیئرٹی ڈنر 27اپریل کو ہوگا

  



کراچی (پ ر) گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے ویلفیئر پروجیکٹس کے لیے چیئریٹی ڈنر کا اہتمام گورنر ہاوس کراچی میں جمعہ 27اپریل 2018کو کیا جائے گا، اس تقریب کے مہمان خصوصی گورنر سندھ ہیں ، اور اس تقریب میں 600سے زائد عمائدین شہر سی ایس آر لیڈرز اور کاروباری اور صنعتی افراد اور پاکستان کے کاروباری اداروں کے سی ایس آر ہیڈز اور چیئرمین اور سی ای اوز شرکت کریں گے۔ اس تقریب کا بنیادی مقصدپاکستان کے تمام بڑے کاروباری اداروں اور کاروباری شخصیات کو گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے 23سال پر محیط تعلیم ، صاف پانی کی فراہمی اور دیگر منصوبوں میں کے بارے میں موجودہ سال تک کے سفراور درپیش چیلنجز سے آگاہ کرنا ہے،اس موقع پر گرین کریسنٹ ٹرسٹ کو اس کے سیکٹروں کی تعداد میں موجود ہ ڈونرز کے ساتھ ساتھ دیگر اداروں ، دیگر کاروباری شخصیات کی جانب سے کثیر تعداد میں بھرپورطریقے سے عطیات دیئے جائیں گے۔ اس مو قع پر جمع کیے جانے والے عطیات گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے تحت صوبے کے دوردراز اور پسماندہ علاقوں میں جاری 800سے زائد خالص خیراتی منصوبوں پر خرچ کیے جائیں گے۔ گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے سالانہ چیئریٹی پروگرام کا اہتمام گورنر ہاوس میں کیا جارہاہے ، جس میں مخیر حضرات سے حاصل کیے گئے عطیات سندھ بھرکے دیہی علاقوں میں گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے تحت چلنے والے 153سے زائد اسکولوں اور 600سے زائد واٹر سپلائی کے منصوبوں پر کام میں لائیں جائیں گے۔ اس موقع پر گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر زاہدسعید کا کہنا تھا کہ ہم گورنر سندھ محمد زبیر کے شکر گزار ہیں کہ وہ گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے فلاحی منصوبوں میں دلچسپی لیتے ہوئے ہمارے سالانہ ڈنر کا اہتمام گورنر ہاوس میں کر رہے ہیں، زاہد سعید نے کہا کہ اس ڈنر کا مقصد گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے تحت سندھ کے دوردراز اور پسماندہ علاقوں میں خالصتا خیراتی بنیادوں پرچلنے والے اسکولوں میں زیرتعلیم 29ہزار سے زائد طلبہ و طالبات کوتعلیم فراہم کرنااور تھر کے 600سے زائد دیہاتوں میں صاف پانی کی فراہمی کو جاری رکھنا ہے،جبکہ ہمارا عزم ہے کہ 2020کے اختتام تک ہمارے اسکولوں میں زیرتعلیم طلبہ کی تعداد ایک لاکھ ہوجائے گی اور ہم تھر کے 2300دیہاتوں میں صاف پانی کی فراہمی کو ممکن بنادیں گے۔ زاہد سعید کا کہنا تھا کہ گرین کریسنٹ ٹرسٹ کے وسیع و عریض خیراتی منصوبوں کو جاری و ساری رکھنے کے لیے کم و بیش 80کروڑ روپے سالانہ کی لازمی ضرورت ہے،اس حوالے سے حالیہ سالوں میں سیکٹروں کی تعداد میں دیگر کاروباری اور صنعتی اداروں کے بیش بہاتعاون کے ساتھ ساتھ سندھ ایجوکیشن فاونڈیشن بھی بھرپور طریقے سے مالی معاونت فراہم کررہاہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...