’10 سال سے میں اپنے شوہر کے ساتھ ہوں، اس سے بے حد پیار کرتی تھی لیکن پھر ایک دن وہ گھر آیا تو اس کے ساتھ۔۔۔‘ خاتون نے انٹرنیٹ پر ایسی بات کہہ دی کہ تمام خواتین کے ہوش اُڑادئیے، کوئی سوچ بھی نہیں سکتا کہ ایسا بھی ممکن ہے

’10 سال سے میں اپنے شوہر کے ساتھ ہوں، اس سے بے حد پیار کرتی تھی لیکن پھر ایک دن ...
’10 سال سے میں اپنے شوہر کے ساتھ ہوں، اس سے بے حد پیار کرتی تھی لیکن پھر ایک دن وہ گھر آیا تو اس کے ساتھ۔۔۔‘ خاتون نے انٹرنیٹ پر ایسی بات کہہ دی کہ تمام خواتین کے ہوش اُڑادئیے، کوئی سوچ بھی نہیں سکتا کہ ایسا بھی ممکن ہے

  



سیاٹل(نیوز ڈیسک) کہتے ہیں کہ سالہا سال ایک ساتھ رہنے والے میاں بیوی کی ہر بات ایک دوسرے پر عیاں ہو جاتی ہے لیکن کیا واقعی ایسا ہی ہے؟ شاید سچ تو یہ ہے کہ کچھ ایسے راز بھی ہوتے ہیں جو بسا اوقات ایک عمر گزرجانے پر بھی سامنے نہیں آتے۔ ایک ایسے ہی واقعے کا ذکر امریکا میں مقیم بھارتی نژاد خاتون نے ٹائمز آف انڈیا کے لئے لکھے گئے اپنے بلاگ میں کیا ہے۔

یوٹیوب چینل سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

اپنے ساتھ پیش آنے والے المیے کے بارے یہ خاتون لکھتی ہیں ”محبت آپ کو عجب کاموں پر مجبو رکردیتی ہے۔ میں بھی اپنے خاوند سے ایک دہائی تک محبت کرتی رہی، 10 سال کی محبت جس نے ہمیں ایک جوڑے سے ایک فیملی میں بدل دیا۔ میں بہت خوش تھی اور ہر وقت خدا کا شکر اد اکرتی تھی کہ اس نے مجھے ایسی خوبصور ت زندگی دی۔ جب میں سمجھ رہی تھی کہ اس سے زیادہ خوبصورت زندگی ممکن نہیں تو اچانک میری زندگی میں وہ موڑ آگیا جس نے سب کچھ ہی بدل دیا۔

میرا تعلق ایک قدامت پسند برہمن خاندان سے تھا لیکن میں نے ایک مسلمان سے محبت کی اور پھر ا سکے ساتھ شادی کر لی۔ یہ میری پہلی شادی تھی، جو میرے والدین کی مرضی کے خلاف ہوئی اور انہوں نے میرے ساتھ قطع تعلق کرلیا تھا۔ میری یہ شادی دو سال چلی جس کے بعد ہماری طلاق ہوگئی۔ کئی سال بعد میری زندگی میں ایک اور شخص آیا۔ اس کا تعلق راجستھان سے تھا لیکن وہ بچپن سے ہی سیاٹل میں مقیم تھا۔ اس کے ساتھ شادی ہوئی تو میں سمجھی کہ بالآخر مجھے بھی سچی محبت مل گئی ہے۔ ہماری زندگی بہت اچھی تھی اور میں ہر وقت سکھی اور شاد رہتی تھی۔

میرا شوہر کبھی کبھار بھارت کا چکر لگا لیتا تھا۔ ہماری شادی کے دس سال جب ایک بار وہ بھارت گیا تو واپس اکیلا نہیں آیا۔ اس بار اس کے ساتھ 12 سال کا ایک شرمیلا سا لڑکا بھی تھا۔ اس نے آنے سے پہلے مجھے کہا تھا کہ میں ایک ایسی خبر کے لئے تیار رہوں جو ہمارے رشتے کا امتحان لے گی۔ میں نے بہت سوچا لیکن میرے وہم و گمان میں بھی نہیں تھا کہ یہ خبر میرا گھر ایک بار پھر اجاڑ دے گی۔ میرا شوہر بھارت سے جس لڑکے کو اپنے ساتھ لایا تھا وہ اس کی پہلی شادی سے پیدا ہونے والا بیٹا تھا۔

میں واقعی اس خبر کے لئے تیار نہیں تھی اور میرے لئے یہ اتنی بڑی آزمائش تھی جس کا سامنا کرنا میرے لئے ممکن نہیں تھا۔ اس نے وضاحت کرنے کی کوشش کی لیکن میں کچھ بھی سننے کی ہمت نہیں رکھتی تھی۔ میں نے اپنی بیٹی کو ساتھ لیا او راس کا گھر چھوڑ دیا۔ ایک عرصے تک وہ مجھے سمجھانے کی کوشش کرتا رہا لیکن میرے لئے یہ سمجھنا ناممکن تھا کہ 10 سال تک وہ کیونکر مجھے دھوکہ دیتا رہا۔ بالآخر ہماری طلاق ہو گئی اور ایک بار پھر میں تنہائی کی زندگی گزار رہی ہوں۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...