"ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی کا معاملہ کئی مرتبہ اعلی سطح پر اٹھایا گیا اور۔ ۔ ۔" وزارت خارجہ نے عدالت کواندر کی بات بتادی

"ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی کا معاملہ کئی مرتبہ اعلی سطح پر اٹھایا گیا اور۔ ۔ ...

  

کراچی(ویب ڈیسک) سندھ ہائیکورٹ نے امریکا میں قید ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی وطن واپسی سے متعلق وزارت خارجہ کے جواب جمع کرانے پر درخواست گزار کے وکیل کو جواب الجواب جمع کرانے کا حکم دیدیا، وزارت خارجہ کی طرف سے بتایاگیا کہ عافیہ صدیقی کی رہائی کا معاملہ کئی مرتبہ امریکہ کیساتھ اعلیٰ سطح پر اٹھایا گیا اور ان کے اہلخانہ کو آگاہ بھی کرتے رہے، ان کیساتھ برے سلوک پر ایک لوکل سٹافر کو بھی ذمہ داریوں سے ہٹایا گیا۔

ایکسپریس کے مطابق جسٹس محمد علی مظہر اور جسٹس یوسف علی سعید پر مشتمل دو رکنی بینچ کے روبرو امریکا میں قید ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی وطن واپسی سے متعلق درخواست کی سماعت ہوئی، دوران سماعت وزارت خارجہ کی جانب سے جواب جمع کرا دیا گیا۔تحریری جواب میں کہا گیا کہ امریکا سے ڈاکٹر عافیہ صدیقی کے ساتھ اچھے برتائو سے متعلق معاملہ اٹھایا ہے، ڈاکٹر عافیہ کے ساتھ جیل میں برے سلوک پر امریکی حکام نے تحقیقات بھی کیں، تحقیقات پر جیل کے ایک لوکل  سٹاف کو ہٹایا گیا، ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی کا معاملہ کئی مرتبہ اعلی سطح پر اٹھایا گیا، ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی دستخط شدہ رحم کی اپیل امریکی صدر کو مارچ 2020 کو بھیجی جا چکی، ڈاکٹر عافیہ صدیقی کے اہلخانہ کو صورتحال سے باقاعدہ آگاہ کر رہے ہیں۔

عدالت نے وزارت خارجہ کے جواب پر درخواست گزار کے وکیل کو 5 مئی تک جواب الجواب جمع کرانے کا حکم دیدیا۔

مزید :

قومی -