کیا مردوں کے ساتھ تیراکی کرنے سے بھی خواتین حاملہ ہوسکتی ہیں؟

کیا مردوں کے ساتھ تیراکی کرنے سے بھی خواتین حاملہ ہوسکتی ہیں؟
کیا مردوں کے ساتھ تیراکی کرنے سے بھی خواتین حاملہ ہوسکتی ہیں؟

  

جکارتہ(مانیٹرنگ ڈیسک) انڈونیشیاءمیں ایک سرکاری عہدیدار نے گزشتہ دنوں مردوں اور خواتین کے اکٹھے پیراکی کرنے کے حوالے سے ایسی عجیب و غریب اور شرمناک بات کہہ ڈالی کہ اسے نوکری سے ہی ہٹا دیا گیا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق اس خاتون عہدیدار کا نام سیتی حکماوتی ہے جس نے گزشتہ دنوں اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ جو خواتین مردوں کے ساتھ سوئمنگ پولز میں پیراکی کرتی ہیں وہ اس سے حاملہ بھی ہو سکتی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق حکماوتی کے اس بیان کی ویڈیو سوشل میڈیا پر پوسٹ ہوئی تو پوری دنیا میں وائرل ہو گئی اور دنیا بھر سے لوگ ان کا تمسخر اڑانے لگے جس پر اعلیٰ حکام نے نوٹس لیتے ہوئے انہیں حکم دے دیا ہے کہ یا تو وہ خود عہدے سے استعفیٰ دے دیں، یا پھر انہیں زبردستی نکال دیا جائے گا۔ واضح رہے کہ حکماوتی ملک کے ادارے چائلڈ پروٹیکشن میں کمشنر کے عہدے پر فائز تھیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -