آفیسرز کالونی: پلاٹ نمبر 2ای 7ای  کے معاملے پر ہائی کورٹ، ایم ڈی اے  گورننگ باڈی کے فیصلوں پر عمل درآمد کیس کا فیصلہ عدالت عالیہ میں جمع کرایا  جائیگا، ڈی جی آغا محمد علی عباس کی بات چیت

آفیسرز کالونی: پلاٹ نمبر 2ای 7ای  کے معاملے پر ہائی کورٹ، ایم ڈی اے  گورننگ ...

  

 ملتان (سٹی رپو رٹر)ائریکٹر جنرل ایم ڈی اے آغا محمد علی عباس نے(بقیہ نمبر20صفحہ6پر)

 کہا ہے کہ پلاٹ 2Eاور 7Eآفیسرز کالونی کے معاملے میں عدالت عالیہ ملتان اور ایم ڈی اے کی 81 ویں، 82ویں اور 83ویں گورننگ باڈی کے فیصلوں پر عمل درآمد کیا گیا ہے۔میرے ڈائریکٹر جنرل ایم ڈی اے بننے سے بہت عرصہ پہلے ایم ڈی اے انتظامیہ نے ضلعی انتظامیہ کے ساتھ مل کر متعدد بار پلاٹ مالکان کو قبضہ دلوانے کے لئے غیر قانونی قابضین سے قبضہ چھڑوانے کی کوشش کی لیکن بھرپور مزاحمت کی وجہ سے کامیابی نہ ہوئی۔81ویں اور 82ویں گورننگ باڈی کے اجلاس میں میاں جمیل احمد نے بطور چیئرمین ایم ڈی اے اجلاس کی صدارت کی جس میں مالکان کو پلاٹ دینے کی منظوری دی گئی۔میں نے بطور ڈائریکٹر جنرل ایم ڈی اے اس ایجنڈا پوائنٹ پر اپنی عزیز داری ہونے کی وجہ سے اجلاس میں شرکت نہیں کی۔ پلاٹ 2Eاور 7Eآفیسرز کالونی ملتان ایم ڈی اے اور مالکان کے درمیان ایک پرانا ایشو ہے۔مالکان بالترتیب ڈاکٹر سعیدالدین نقوی مرحوم اور آغا حسن رضا مرحوم نے یہ پلاٹ 1962میں خریدے جبکہ دونوں مالکان نے پلاٹوں کا قبضہ نہ ملنے پر عدالت عالیہ میں رٹ دائر کر دی۔عدالت عالیہ کے 2004کے فیصلے کے مطابق مالکان کو ایم ڈی اے کی طرف سے متذکرہ پلاٹ کا  قبضہ یا متبادل پلاٹ نہیں دیا گیا۔مذکورہ پلاٹوں کا فیصلہ کرنے کیلئے معزز عدالت سپریم کورٹ اور ہائی کورٹ ملتان بینچ کے فیصلوں کی روشنی میں وزیر اعلی سیکرٹریٹ سے بھی ڈائریکشن آئی۔ ان ڈائریکشن کی بنیاد پر اس کیس کو ایم ڈی اے کی 81ویں گورننگ باڈی کا حصہ بنایا گیا۔اس گورننگ باڈی کا اجلاس 17مارچ 2020کو منعقد ہوا جس کی صدارت اس وقت کے چیئرمین ایم ڈی اے میاں جمیل احمد نے کی جبکہ اس وقت کے وائس چیئرمین ایم ڈی اے ممتاز احمد قریشی بھی اجلاس میں شریک ہوئے۔چیئرمین ایم ڈی اے میاں جمیل احمد اور وائس چیئرمین ایم ڈی اے ممتاز احمد قریشی کی ہدایت اور فیصلے کے مطابق اس مسئلے کو حل کرنے کے لئے ایک کمیٹی تشکیل دی گئی جس میں ممبر صوبائی اسمبلی و ترجمان وزیر اعلی پنجاب میڈم سبین گل خان،ڈپٹی ڈائریکٹر ٹاؤن پلاننگ محسن رضا،ڈپٹی ڈائریکٹر ایڈمن عرفان قریشی اور لیگل ایڈوائزر ایم ڈی اے ملک سہیل شجرا کو بطور کمیٹی ممبران نامزد کیا گیا۔82 ویں گورننگ باڈی  کے اجلاس میں  اس کمیٹی نے اپنے کئی اجلاسوں کی صورت میں تمام قانونی تقاضوں کو پورا کرتے ہوئے اور اعلی عدالتوں کے فیصلوں کو مدنظر رکھتے ہوئے 34ویں گورننگ باڈی کے فیصلے کو بحال کرنے کی تجویز دی جس کے فیصلے کے مطابق مالکان کو ایم ڈی اے کی طرف سے مساوی قیمت متبادل پلاٹ دیا جا نا تھا۔جس کی صدارت بھی  میاں جمیل احمد نے کی۔گورننگ باڈی کے تمام ممبران نے کمیٹی کے فیصلے کی توثیق کرتے ہوئے منظوری دی۔ چیئر مین ایم ڈی اے میاں جمیل احمد کے اعتراض پر TORs  طے کئے گئے۔ طے  شدہ TORs  کو منٹس  جاری کرتے وقت تبدیل کر دیا گیا۔ طے شدہ TORs  کو دوبارہ بحال کرنے کے لئے اس ایشو کو  83 ویں گورننگ باڈی میں دوبارہ پیش کیا گیا اور منظوری دی گئی۔ تمام گورننگ باڈی اجلاس اور تشکیل دی گئی کمیٹیوں کے فیصلوں کو مد نظر رکھتے ہوئے اس کیس کا فیصلہ عالیہ میں جمع کروایا جائے گا۔

محمد علی عباس

مزید :

ملتان صفحہ آخر -