ملتان ڈیرہ: کرونا حملوں میں تیزی، مزید 9مریض جاں بحق 

ملتان ڈیرہ: کرونا حملوں میں تیزی، مزید 9مریض جاں بحق 

  

ملتان:ڈیرہ، مظفر گڑھ، بہاولپور، جام پور، وہاڑی، رحیم یارخان، چوک اعظم (وقائع نگار، نامہ نگار، سٹی رپورٹر، بیورورپورٹ)نشتر ہسپتال ملتان میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا میں مبتلا 08 مزید مریض جاں بحق ہوگئے،اموات کی مجموعی  تعداد 603ہو گئی زیر علاج کورونا کے مریضوں کی تعداد 103 ہوگئی،22مریضوں کی حالت تشویشناک ہے  فوکل پرسن نشتر ہسپتال ڈاکٹر عرفان ارشد کے مطابق نشتر ہسپتال کے آئی سولیشن وارڈز میں زیر علاج ملتان کے  رہائشی 62 سالہ اسلم،  58  سالہ عابد حسین،55 سالہ فردوس زہرہ،73  سالہ عبدالغفور،56 سالہ اعجاز احمد،72 سالہ محمد اسلم،62 سالہ محمد افضل اور خانیوال کے 56 سالہ محمد رمضان نے دم توڑ دیا،یوں یکم اپریل 2020  سے 24 اپریل 2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 603 ہو گئی ہینشتر ہسپتال میں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 103ہو گئی ہے جن میں سے 71 مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے زیر علاج 22 مریضوں کی حالت تشویشناک  ہے کورونا کے شبہ میں 76مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار  ہے، رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 5 ہزار 395 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 2 ہزار 42 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے۔ڈیرہ غازیخان میں بھی کرونا کی صورتحال تشویشناک ہوگئی، ٹیچنگ ہسپتال میں ہیلتھ ورکرز کی ویکسی نیشن نہ ہو سکی ہیڈ نرس اہلخانہ سمیت وائرس کا شکار،جبکہ ٹیچنگ ہسپتال میں کرونا سے لڑتے ایک اور مریض جان کی بازی ہار گیا جبکہ ہسپتال میں داخل مریضوں کی تعداد 49تک پہنچ گئی تفصیل کے مطابق ڈسٹرکٹ ہسپتال میں اس وقت مجموعی طور پر 49مریضوں میں سے سات مریضوں کی حالت انتہائی تشویشناک ہے جو کہ وینٹی لیٹرز پر ہیں مزید ایک مریض امام بخش جاں بحق ہو گیا فوکل پرسن ٹیچنگ ہسپتال ڈاکٹر خالد تحسین نے بتایا کہ ڈسٹرکٹ ہسپتال میں گزشتہ روز کل 245افراد کے ٹیسٹ لئے گئے جن میں سے 30افراد کا رزلٹ مثبت آیا جبکہ 215افراد کی رپورٹ نیگٹو آئی تاہم کرونا کے مریضوں کی تعداد میں روز بروز بتدریج اضافہ ہو تا جا رہا ہے اس ضمن میں ہسپتال انتظامیہ نے کرونا وارڈ کے بیڈز توسیع کر کے خصوصی اقدامات کئے ہیں تاکہ قیمتی جانوں کو بچایا جا سکے دریں اثناء حکومت کی طرف سے بار بار اعلانات کے باوجود کرونا کے خلاف فرنٹ فائٹرز ہیلتھ ورکرز کو بھی ویکسین نہیں لگائی گئی جس کی وجہ سے ہسپتال کا عملہ بھی کرونا وائرس کا شکار ہو نے لگا ہے گزشتہ دنوں ٹیچنگ ہسپتال میں چارج نرس شبنم نورین کا کرونا ٹیسٹ پازیٹو آیا جس کے بعد ان کے شوہر محمد خالد اور بچوں کے ٹیسٹ کئے گئے تو ان کے کرونا ٹیسٹ بھی پازیٹو آئے جنہیں گھر میں قرنطینہ کر دیا گیا ہے مشیر صحت پنجاب اور وزیر اعلیٰ کے شہر میں ہسپتال عملہ کی ویکسی نیشن نہ ہو نے پر شہریوں لطیف،حسنین،ارسلان،اسحاق،مزمل و دیگر نے سخت تشویش کا اظہار کرتے ہو ئے صورتحال پر وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار اور وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد اور مشیر صحت پنجاب حنیف خان پتافی سے فوری نوٹس لینے اور محکمہ صحت کے فیلڈڈیوٹی عملہ کی فوری ویکسی نیشن کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔ضلع مظفرگڑھ کے مختلف سکولوں کے اساتذہ کے کورونا وائرس کے ٹیسٹ پازیٹیو آنے پر ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی مظفرگڑھ نے ضلع کے مزید 5 سکولز گورنمنٹ قائد ہائی سکول مظفرگڑھ، گورنمنٹ گرلز پرائمری سکول نورے والہ، گورنمنٹ گرلز پرائمری سکول پپلی اور گرلز ہائی سکول لٹکراں مظفرگڑھ کو اگلے دس روز کے لئے بند کر دیا ہے، ضلع مظفرگڑھ کے تعلیمی اداروں میں کورونا وائرس کے پھیلا پر والدین، طلبہ اور اساتذہ میں خوف وہراس پایا جاتا ہے۔گورنمنٹ گریجویٹ کالج بغدادروڈ‘5 طلبہ میں کروناپازیٹو‘کالج 3 مئی تک بندکردیاگیا نوٹی فی کیشن جاری زرائع کے مطابق گورنمنٹ گریجویٹ کالج بغداد روڈ بہاول پور میں طلبہ کے 5 کورونا پازیٹو کیس آنے پر کالج آج بروزہفتہ سے 3 مئی تک کے لئے بند کردیا گیا ہے،جبکہ ڈائریکٹر آف ایجوکیشن (کالجز)بہاول پورڈویژن بہاول پور کے جاری کردہ  نوٹی فی کیشن 9458-NDBA بتاریخ23 اپریل 2021 کے مطابق کالج ہذاکودس روز کے لئے بندکردیاگیاہے تاکہ کروناوائرس کے پھیلاؤکوروکاجاسکے۔ سول ہسپتال میں کرونامریضوں کی تعداد300 سے زائد ہوچکی ہے۔گزشتہ 24گھنٹو ں میں 75شہری کرونا وبا کا شکار ہوگئے اب تک کرونا سے جاں بحق ہونے والے افراد کی تعداد 168ہوگئی ہے۔ بہاولپور میں کرونا کے کیسز کی تعداد دن بدن بڑھتی جا رہی ہے کرونا کی تیسری لہر انتہائی خطرناک ہے عوام احتیاط کریں  ان خیالات کااظہاراے  ایم ایس ایڈمن سول ہسپتال بہاو ل پور حامد خان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا ہے کہ کرونا پر قابو پانے کے لئے ایس ا وپیز پر سختی سے عمل در آمد ضروری ہے۔ اس وقت کرونا  تیزی سے پھیل رہا جس کے باعث ہسپتالوں پر دبا بڑھ رہاہے۔ ضلع راجن پور میں کرونا کے وار تھم نہ سکے۔ گورنمنٹ گرلزہائی کنیال ہائی سکول راجن پور میں دو معلمات اور پانچ بچیوں میں کرونا وائرس مثبت آگیا۔ سی ای او ایجوکیشن راجن پور نے سکول کو بندکر دیا۔ ضلع راجن پور میں پندرہ کیس سامنے آئے ہیں جن میں ایک خاتون ٹیچرز ہلاک ہوچکی ہے۔ سکولوں کو بند کرنے کے لیے ڈپٹی کمشنر راجن پور کے توسط سے سیکرٹری تعلیم پنجاب کو مراسلہ جاری کیا جاچکا ہے۔ اساتذہ اور بچوں کی زندگی عزیز ہے سی ای او ایجوکیشن راجن پور ملک مسعود ندیم نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اساتذہ اور بچوں کی زندگیاں عزیز ہیں۔ تاہم ایس او پی ایز  پر عمل درامد کرکے اس بیماری سے نجات حاصل کی جا سکتی ہے۔ ضلع راجن پور کے سکولوں کو بند کرنے کے لیے ڈپٹی کمشنر راجن پور نے دس دن قبل سیکرٹری تعلیم پنجاب کو مراسلہ جاری کیا۔  ڈپٹی کمشنر وہاڑی مبین الہی نے  اچانک ٹی ایچ کیو ہسپتال بورے والا کا دورہ کیا اور طبی سہولتوں کے علاوہ ہسپتال میں کورونا کے مریضوں کے ٹیسٹ اور دیگر ضروری سہولتوں کا جائزہ لیا اس موقع پر انہوں نے بورے والا میں کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسسز کے پیش نظر فوری طور پر کورونا وارڈ کے قیام کی منظوری دیدی انہوں نے بتایا کہ 30 بیڈ پر مشتمل کورونا وارڈ میں 2 وینٹی لیٹر،آکسیجن اور دیگر بنیادی طبی سہولتوں کی فراہمی یقینی بنائے جائے گی جبکہ سی ٹی سکین کی سہولت کیلئے بھی ہدایات جاری کر دی گئی ہیں ڈی سی وہاڑی نے کہا کہ کورونا کے کیسسز میں غیر معمولی اضافہ کو دیکھتے ہوئے حکومت نے متاثرہ مریضوں کو مقامی سطح پر تمام تر طبی سہولتوں کی فراہمی کیلئے تمام وسائل بروئے کار لانے کی ہدایات جاری کر دی ہیں اور کورونا کی علامات والے افراد کے ٹیسٹوں کی تعداد میں بھی اضافہ کیا جا رہا ہے جبکہ کورونا کی ویکسیئن لگانے کیلئے بھی قائم کردہ مراکز پر ویکسیئن کا عمل تیزی سے جاری ہے اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر محمد عمر فاروق،سی او میونسپل کارپوریشن را محمد علی،ایم ایس ٹی ایچ کیو ڈاکٹر محمد عمران بھٹی اور دیگر افسران بھی موجود تھے۔حکومت پنجاب کی ہدایت پر چیف ایگزیکٹو افیسر تعلیم راجن پور نے ضلع بھر کے چودہ سرکاری اور دس پرائیویٹ سکول بند کر دئیے ہیں۔ مزکورہ سکولوں میں پہلی سے اٹھویں تک کلاسز نہیں ہو گی۔ خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے گی۔سی ای او ایجوکیشن راجن پو رملک مسعود ندیم کی طرف سے جاری کیے گئے مراسلہ کے مطابق گورنمنٹ ہائی سکول نمبر ایک جام پور۔ بوائز ماڈل ہائی سکول جام پور۔ سٹی اسلامیہ ہائی سکول جام پور۔ گورنمنٹ گرلز ہائی سکول نمبر دو جام پور۔ گورنمنٹ گرلز ہائی سکول نمبر ایک جام پور۔ گورنمنٹ گرلز ایلمنغری سکول نمبر چار جام پور۔گورنمنٹ سکول نمبر دو دوبئی کالونی راجن پور۔ ہائر سیکنڈیری سکول کوٹ مٹھن۔ ہائی سکول ماڈل نمبر ایک راجن پور۔ گرلز ہائی سکول کوٹلہ مغلاں۔   گرلزہائر سیکنڈیری سکول کوٹ مٹھن۔ ہائی سکول شکار پور۔ گرلز ماڈل ہائی سکول نمبر ایک راجن پور۔ گرلز مڈل سکول بستی جمعہ ارائیں پرائیوٹ سکولوں میں پائلیٹ جونیئر ماڈل سکول جام پور۔ دی لیڈر سسٹم سکول ملانوالہ روڈ جام پور۔ سٹی ہائی ایسٹ بوائز ہائی سکول جام پور۔ پاکستان حراء سکول جام پور۔ ذہرہ ہائی سکول جام پور۔پنجاب بپلک سکول جام وپر۔رینجیرز ہائی سکول پبلک سکول راجن پور۔ النور ہائی سکول راجن پور۔ دی راوین ہائی سکول راجن پور۔ شامل ہیں۔مزکورہ سکولوں میں پہلی سے اٹھوین تک کلاسز نہ ہو نگی۔ پندرہ دن کے لیے سکولوں کو بند کیا گیا ہے۔

سکول بند

مزید :

صفحہ اول -