مودی کی مقبوضہ کشمیر آمدپر شدید احتجاج، یوم سیاہ منایا گیا، جلسہ گاہ کے قریب دھماکہ، بھارتی فوجیوں نے مزید 3نوجوان شہید کر دیے

مودی کی مقبوضہ کشمیر آمدپر شدید احتجاج، یوم سیاہ منایا گیا، جلسہ گاہ کے قریب ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


            سرینگر(مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)مقبوضہ کشمیر میں بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے جلسہ گاہ سے چند کلومیٹر دور زور دار دھماکا ہوا ہے جس کے بعد علاقے میں سکیورٹی سخت کردی گئی۔بھارتی میڈیا کے مطابق جموں کشمیر کے گاوٓں لالیانہ میں وزیراعظم نریندر مودی نے عوامی اجتماع سے خطاب کرنا تھا تاہم جلسہ گاہ سے کچھدوری پر زوردار دھماکا ہوا ہے۔زوردار دھماکے کی آواز سنتے ہی پولیس کی دوڑیں لگ گئیں اور جلسے کے انتظامات کو روک دیا گیا۔ دھماکے کی جگہ بہت بڑا گڑھا پڑ گیا۔ دھماکے میں کوئی جانی اور مالی نقصان نہیں ہوا۔ مودی سرکار نے اگست 2019 میں کالے قانون کو منظور کرکے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرکے اسے اکائی کے طور پر وفاق میں ضم کرلیا تھا۔نریندر مودی کے دورہ سرینگر کے موقع پر کنٹرول لائن کے دونوں اطراف یوم سیاہ منایا گیا، اس موقع پر مقبوضہ کشمیر کو چھاؤنی میں تبدیل کر دیا گیا، جگہ جگہ فوج کے پہرے، خار دار تاریں لگا کر راستے بند کر دیئے گئے۔ تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارتی وزیراعظم مودی کے دورے کے موقع پر وادی میں مکمل ہڑتال کی گئی،  ہڑتال کی کال کل جماعتی حریت کانفرنس نے دی تھی۔ وادی بھر میں ہڑتال کے سبب چھوٹی بڑی مارکیٹیں بند، راستے سنسان رہے۔حریت کانفرنس نے جاری بیان میں کہا ہے کہ کشمیری مقبوضہ وادی پر بھارت کے غیر قانونی قبضے کو مسترد کرتے ہیں۔ظلم وستم کی تمام حدیں پار کر دیں، کشمیری کبھی سرنڈر نہیں کریں گے، تحریک آزادی کشمیر کامیاب ہوں گی۔ جب تک آزادی نہیں مل جاتی، کشمیریوں کیلئے ہر دن یوم سیاہ کی طرح ہے۔ کشمیری 75 سا ل سے جو قربانیاں دے رہے ہیں، اس کی مثال پوری دنیا میں نہیں ملتی، حق خودارادیت کی جدوجہد جاری رہے گی، بھارتی قیادت نے پورے خطے کا امن دا پر لگا دیا ہے۔دریں اثناء بھارت کے غیر قانو نی زیر قبضہ جموں و کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی کے دوران گزشتہ روز ضلع پلوامہ میں مزید تین نوجوانوں کو شہید کردیا جس سے جمعرات سے شہید ہونیوالوں کی تعداد 11 ہوگئی۔کشمیر میڈیاسروس کے مطابق فوجیوں نے نوجوانوں کوضلع پلوامہ کے علاقے پاہو Pahoo میں محاصرے اور تلاشی کی کارروائی کے دوران شہید کیا۔آخری اطلاعات تک علاقے میں بھارتی فوج کا آپریشن جاری تھا۔

کشمیریوم س

مزید :

صفحہ اول -