پٹرول قیمت میں 51روپے فی لٹر اضافے کا امکان

پٹرول قیمت میں 51روپے فی لٹر اضافے کا امکان

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
بہاول پور(نامہ نگار)ڈیزل نایاب ہوگیا، فرٹیلائزر کی قیمتوں میں خاموشی سے اضافہ کردیاگیا، آئی ایم ایف کے حکم پر پٹرول کی قیمت میں 51روپے اضافہ کرنے کاامکان ہے، بجلی کی پلانٹس تاحال ٹھیک نہ ہوسکے، عوام کے مسائل جوں کے توں ہیں، موجودہ حکومت بھی عوام کی امیدوں پرپانی پھیرنے لگی، نئی حکومت کی توجہ ای سی ایل سے نام نکالنے،اپنے کیسیز کمزورکرنے پر،مہنگائی مزیدبڑھنے لگی۔ڈیزل کی دستیابی، ادویات کی قیمتو ں میں کمی کیساتھ ساتھ(بقیہ نمبر3صفحہ6پر)
 عوام کوریلیف دینے کیلئے ہنگامی بنیادوں پرفوری اقدامات کئے جائیں۔ ان خیالات کااظہار سابق صدر بہاولپورچیمبرآف کامرس اینڈ انڈسٹری شیخ عباس رضا نے میڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاکہ سابقہ حکومت میں فرٹیلائزر میسرنہیں تھی اور لوگ لائنوں میں لگے رہے اورفرٹیلائزرکے حصول کیلئے دن رات دھکے کھاتے رہے اور اب نئی موجودہ حکومت نے فرٹیلائزر کی قیمتوں میں خاموشی سے اضافہ کردیاہے جوافسوسناک ہے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان میں ڈیزل ناپیدہوچکاہے، کسان ڈیزل کے حصول کیلئے پمپوں پرڈیرے ڈالے بیٹھے ہیں،گندم کی کٹائی کاسیزن آنیوالاہے جبکہ تھریشرزاور ٹریکٹرز کوچلانے کیلئے ڈیزل چاہیے جوکہ ملنے کانام نہیں لے رہا،لوڈشیڈنگ کے خاتمے اوربجلی کی بلاتعطل فراہمی کیلئے پلانٹس کاتاحال ٹھیک نہیں کیاگیا جس سے لوڈشیڈنگ بڑھ رہی ہے،عوام کے مسائل جوں کے توں ہیں۔ انہوں نے مزید کہاکہ عوام کوموجودہ نئے حکمرانوں سے توقع تھی کہ مہنگائی کاخاتمہ کیاجائے گا تاہم موجودہ حکومت نے بھی عوام کی امیدوں پرپانی پھیردیاہے، مہنگائی مارچ کرکے آنیوالوں نے مہنگائی، بیروزگاری پرتوجہ دینے کی بجائے اپنے نام ای سی ایل سے نکالنے، کیسیز کوکمزورکرنے پرتوجہ دے رکھی ہے جبکہ آئی ایم ایف سے تقریبا 51روپے پٹرول بڑھانے کاوعدہ بھی کرلیاگیاہے جوکسی صورت قبول نہیں ایسے اقدامات سے عوام میں مزیدبے چینی اورمایوسی جنم لے گی اورعوام پرمہنگائی کامزیدبوجھ بڑھ جائیگا۔شیخ عباس رضا نے کہاکہ سابقہ گورنمنٹ کے چندمنصوبے عوامی مفادمیں تھے جن میں سٹیزن پورٹل، صحت کارڈ ودیگرشامل ہیں کوبندکرنے کی بجائے چلایاجائے اور ان کوسیاست کی نظرنہ کیاجائے کہ وہ عمران خان نے شروع کئے تھے۔عوام کوریلیف کی فراہمی کیلئے ہنگامی اقدامات اُٹھائے جائیں،ڈیزل کی سپلائی کویقینی بنایاجائے، ادویات کی قیمتوں میں کمی کی جائے۔