افغان حکومت کی جانب سے لشکر گاہ میں امریکی فوجیوں کی تعیناتی کا خیر مقدم

افغان حکومت کی جانب سے لشکر گاہ میں امریکی فوجیوں کی تعیناتی کا خیر مقدم

کابل (اے پی پی) افغانستان نے جنوبی صوبے ہلمند کے صدر مقام لشکر گاہ کو طالبان کی چڑھائی سے بچانے کے لیے تقریباً ایک سو امریکی فوجیوں کی تعیناتی کا خیر مقدم کیا ہے۔جرمن ذرائع ابلاغ کے مطابق 2014ء میں افغانستان سے غیر ملکی دستوں کے انخلاء کے بعد سے امریکی فوجیوں کی تعیناتی کا یہ پہلا بڑا واقعہ ہے۔ حالیہ دنو ں میں پوست کی کاشت کے لیے مشہور اس جنوبی صوبے میں لڑائی میں شدت آ گئی ہے اور طالبان لشکر گاہ سے چند ہی کلومیٹر دور رہ گئے ہیں۔ اس شہر کے طالبان کے قبضے میں جانے کے خطرات بڑھ گئے ہیں۔

اْدھر شمالی افغانستان میں بھی طالبان قندوز شہر کے بہت قریب پہنچ چکے ہیں۔

مزید : عالمی منظر