پریمیئر سروس کی فلائٹ ڈیڑھ گھنٹہ تاخیر سے روانہ، بچوں کو پانی تک نہ دیا گیا

پریمیئر سروس کی فلائٹ ڈیڑھ گھنٹہ تاخیر سے روانہ، بچوں کو پانی تک نہ دیا گیا
پریمیئر سروس کی فلائٹ ڈیڑھ گھنٹہ تاخیر سے روانہ، بچوں کو پانی تک نہ دیا گیا

  


لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)پی آئی اے کی لندن سے لاہور کیلئے روانہ ہونے والی پریمیئر سروس کی فلائٹ ڈیڑھ گھنٹہ تاخیر سے روانہ ہوئی جبکہ اس دوران مسافروں اور بچوں کو پانی تک نہیں دیا گیا۔

روزنامہ خبریں کے مطابق پی آئی اے کے باکمال لوگوں نے لاجواب سروس کا حشر نشر کرکے رکھ دیا ہے۔ 14 اگست سے کرائے کے جہاز لے کر شروع کی گئی پریمیئر سروس کے مسافروں کا حال بھی پی آئی کے دیگر مسافروں جیسا ہی ہوچکا ہے۔ بدھ کے روز لندن سے لاہور کیلئے روانہ ہونے والی فلائٹ ڈیڑھ گھنٹے کی تاخیر سے روانہ ہوئی ۔ اس دوران ایئر کنڈیشنر نہ چلائے جانے کی وجہ سے مسافروں کا گرمی سے برا حال ہوگیا ۔

روزنامہ پاکستان کی تازہ ترین اور دلچسپ خبریں اپنے موبائل اور کمپیوٹر پر براہ راست حاصل کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

جہاز کا عملہ مزے سے بیٹھا رہا جبکہ وہاں موجود خواتین اور بچے پانی کیلئے تڑپتے رہے لیکن انہیں کسی نے بھی پانی نہ پلایا۔ متعدد مسافروں نے عملے سے جہاز کی روانگی کے وقت کے بارے میں دریافت کیا لیکن عملے کے ارکان کی جانب سے چپ کا روزہ رکھ لیا گیا تھا جس کی وجہ سے مسافر ڈیڑھ گھنٹے تک خوار ہوتے رہے۔

مزید : برطانیہ