جب بھائی اپنی بہن کےہاتھ پر ایک دھاگہ باندھ کرمحبت کااظہار کرتاہے، ہندو برادری اتوار کو رکشہ بندھن منائے گی

جب بھائی اپنی بہن کےہاتھ پر ایک دھاگہ باندھ کرمحبت کااظہار کرتاہے، ہندو ...
جب بھائی اپنی بہن کےہاتھ پر ایک دھاگہ باندھ کرمحبت کااظہار کرتاہے، ہندو برادری اتوار کو رکشہ بندھن منائے گی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

عمرکوٹ (سید ریحان شبیر)پاکستان ہندوستان سمیت دنیا بھر میں بسنے والے ہندو کل "26"اگست بروز اتوار ہندی مہینہ ساون میں راکھی "رکشابندھن"کاتہوار پورے جوش جذبے ولولے کےساتھ منارہی ہے رکشا بندھن کے دن بھائی اپنی بہن سے ہاتھ  پر راکھی بندھوا کر بھائی بہن کے پریم محبت کے مقدس رشتے کو مضبوط کرنے کا عہد کیا جاتا ہے ۔

اس سلسلے میں" نمائندہ ڈیلی پاکستان آن لائن "کو سندھ کے معروف ماہر پامسٹ اور علم نجوم بھگوان داس نےبتایا ہندو دھرم میں "رکشابندھن"راکھی باندھنے کا تہوار انتہائی مقدس اور بھائی بہن کےپریم محبت کےحوالے سے اہمیت کا حامل ہے ہندو دھرم میں لکشمی دیوی نے اپنے شوہر وشنو بھگوان کو راجہ بھلی کی قید سے چھڑانے رہائی دلانے کےلیے لکشمی دیوی نے راجہ بھلی کے ہاتھ پر راکھی "رکشا بندھن "کا دھاگہ ہاتھ پر باندھ کر راجہ بھلی کو بھائی بنا کر وشنو بھگوان کو آزاد کراکر لکشمی دیوی نے راج بھلی سے اپنے شوہر وشنو بھگوان کی حفاظت کاوچن لیا اس دن سے دنیا بھر سمیت پاکستان ہندوستان میں بسنے والے ہندو بھائی بہن کے اس مقدس رشتے کو ہرسال بہن اپنے بھائی کے ہاتھ پر راکھی باندھ کر بھائی بہن کے مقدس رشتے کو مضبوط کرنے کے ساتھ ساتھ بھائی بہن کے سچے  پریم محبت کےاظہار  کا بھی دن ہے۔

"ڈیلی پاکستان آن لائن "کو راکھی فروخت کرنے والے دوکاندار پریم بجیر نے بتایا کہ یہ راکھی مختلف کلر فل دھاگوں اور خوبصورت موتیوں کےساتھ مختلف خوبصورت دیدہ زیب نمونوں میں تیار کی جاتی ہے اور پھر ہندو کمیونٹی سے تعلق رکھنے والے افراد یہ راکھی خرید کر "رکشا بندھن "کی رسم ادا کی جاتی ہے راکھی کے وقت بہن بھائی کی حفاظت سلامتی کےلیے آرتھی خصوصی پوجا کرتی ہے بھائی اس موقع پر عہد کرتا ہےکہ بہن میں ہرحال میں بہن کی حفاظت "رکشا "کرونگا بہن بھائی کو مٹھائی کھلاتی اور دعائیں دیتی ہے بھائی اپنی حیثیت مطابق بہن کو گفٹ اور خرچی دیتا ہے ۔

مزید : علاقائی /سندھ /عمرکوٹ