سسرالیوں کے میبنہ تشدد سے بہو قتل،پولیس کارروائی کرنے سے انکاری

سسرالیوں کے میبنہ تشدد سے بہو قتل،پولیس کارروائی کرنے سے انکاری
سسرالیوں کے میبنہ تشدد سے بہو قتل،پولیس کارروائی کرنے سے انکاری

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

جہانیاں (آن لائن)سسرالیوں کے میبنہ تشدد سے بہو قتل، مقتولہ تین بچوں کی ماں تھی، نوسال قبل عشرت بی بی کی شادی ملتان کے محمد افضل سے ہوئی تھی متاثرین کی درخواست کے باوجود پولیس نے کا رروائی کرنے سے انکار کردیا ۔

تفصیل کے مطابق سسرالیوں کے میبنہ تشدد سے تین مرلہ سکیم جہانیاں کے بلو ہوٹل والے کی بیٹی عشرت بی بی کی شادی نوسال قبل ملتان کے رہائشی محمد افضل سے ہوئی تھی مقتولہ تین بچوں کی ماں تھی والدہ شکیلہ بی بی نے بتایا کہ میری بیٹی کو اس کے سسرالی تشدد کا نشانہ بناتے تھا گزشتہ روز محمد افضل نے بھائی اور اپنے دیگر ساتھیوں سے ملکر میری بیٹی کو تشدد کر قتل کردیا ہے درخواست دینے کے باوجود تھانہ جہانیاں پولیس کاروائی نہیں کر رہی متاثرین نے پولیس کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے وزیراعلی پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔رات گئے ڈی پی اوخانیوال فیصل مختیار نے ایس ایچ او تھانہ جہانیاں سے رپورٹ طلب کر لی۔

مزید : علاقائی /پنجاب /خانیوال