کرکٹ کی تاریخ کا سب سے زبردست ٹیسٹ ، انگلینڈ اور آسٹریلیا کے میچ میں تاریخ رقم ہوگئی، ایسا نتیجہ کہ پوری دنیا حیران پریشان رہ گئی

کرکٹ کی تاریخ کا سب سے زبردست ٹیسٹ ، انگلینڈ اور آسٹریلیا کے میچ میں تاریخ ...
کرکٹ کی تاریخ کا سب سے زبردست ٹیسٹ ، انگلینڈ اور آسٹریلیا کے میچ میں تاریخ رقم ہوگئی، ایسا نتیجہ کہ پوری دنیا حیران پریشان رہ گئی

  


لیڈز (ڈیلی پاکستان آن لائن) ایشز سیریز کے تیسرے ٹیسٹ میچ میں انگلینڈ نے آسٹریلیا کو ایک وکٹ سے شکست دے کر سیریز برابر کردی۔ دونوں ٹیموں کے مابین سیریز کے تیسرے اور آخری ٹیسٹ میچ کو کرکٹ کی تاریخ کا سب سے بہترین ٹیسٹ میچ قرار دیا جارہا ہے کیونکہ اس میں انگلینڈ نے ناممکن کو ممکن کرکے دکھایا ہے۔

لیڈز میں کھیلے گئے تیسرے ٹیسٹ میچ میں آسٹریلیا نے انگلینڈ کو جیت کیلئے 359 رنز کا ہدف دیا تھا جو انگلینڈ نے 9 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کیا ہے۔ میچ کی چوتھی اننگ کے دوران جب ایک کے بعد ایک کھلاڑی آﺅٹ ہونا شروع ہوا تو سب کو یہی امید تھی کہ اس بار کی ایشز سیریز آسٹریلیا کے نام رہے گی لیکن مڈل آرڈر بلے باز بین سٹوکس نے بھرپور جان لڑائی اور اسے تاریخ کا سب سے دلچسپ ٹیسٹ میچ بنادیا۔

بین سٹوکس نے 135 رنز کی شاندار اننگ کھیلی اور لوئر آرڈر بلے بازوں کے ساتھ مل کر 359 رنز کا ہدف حاصل کیا۔ میچ کے دوران ایک طرف تو بین سٹوکس جم کر کھڑے رہے لیکن دوسری طرف 5 کھلاڑی 53 رنز بنا کر آﺅٹ ہوگئے۔سٹوکس نے پھر بھی ہمت نہ ہاری اور آخری دم تک لڑتے ہوئے ٹیم کو فتح سے ہمکنا ر کرادیا۔ خیال رہے کہ یہ وہی بین سٹوکس ہیں جنہوں نے گزشتہ ماہ کرکٹ کی موجد ٹیم کو پہلی بار عالمی چیمپیئن بنوایا تھا۔

مزید : کھیل


loading...