تحریک جعفریہ کا امن وامان کے قیام کیلئے کنٹرول روم قائم کرنے کا مطالبہ

  تحریک جعفریہ کا امن وامان کے قیام کیلئے کنٹرول روم قائم کرنے کا مطالبہ

  

پشاور(سٹی رپورٹر)تحریک نفاذجعفریہ خیبر پختونخوا نے مطالبہ کیا ہے کہ محرم الحرام کے مسائل حل کرنے اور امن و امان کو برقرار رکھنے کیلئے صوبائی سطح پر کنٹرول روم قائم کیا جائے جبکہ ضلع سطح پر انتظامیہ عزاداروں سے تعاون کریں،پشاور پریس کلب میں تحریک نفاذ جعفریہ کے صوبائی صدر سید غضنفر علی شاہ ،صوبائی نائب صدر اجلال حیدر نے دیگر عہدیداران کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ  تحریک نفاذ فقہ جعفریہ بین الاقوامی تنظیم عزائے حسین اور دلائے علی کی ترویج کیلئے 36 سالوں سے کام کررہی ہے۔انہوں نے کہا کہ عرصہ دراز سے محرم الحرام  کے موقع پر صوبائی سطح پر کنٹرول روم قائم کرنے کے حوالے سے متعدد بار حکومت کو اگا ہ کیا لیکن صوبائی حکومت کے بار بار یقین دہانی کے باوجود کنٹرول روم قائم نہیں کیا گیا جسکی وجہ  سے صوبہ بھر کے مختلف اضلاع میں عزاداروں کا مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے جبکہ انتظامیہ غیر نمائندہ تنظیموں اور افراد کیساتھ ملکر حالات کو قابو کرنے کی کوشش کرتے ہے جبکہ تحریک نفاذ جعفریہ سے کوئی رابطہ نہیں کیا جاتا انہوں نے کہا کہ غیر نمائندہ تنظیموں کے افراد کی کوئی غلط قدم پشاور شہر کا امن خراب کرسکتا ہے جبکہ پشاور کے مختلف مقامات پر مجالس عزا مین کیلئے رکاوٹیں ڈالی جارہی ہے عہدیداران کا کہنا تھا کہ میلاد و عزا کے جلوس نکالیں گے ہم ایران یا عربوں کے پھٹو نہیں بلکہ اس نظریے پر کاربند ہے جو فلسطین کیلئے قائد اعظم نے دیا تھا اگر اسرائیل کو حکمرانون نے تسلیم کیا تو نہ حکمران رہینگے اور نہ سیاستدان،حضرت عمر بن خطاب  کی شہادت سے محرم سے قبل ہوئی تھی اس حوالے سے سوشل میڈیا پر عصبیتوں کا فروغ دیا جا رہا ہے جو مسلمانوں کو اپس میں لڑانے کی سازش ہے جبکہ ہم صحابہ کو مانتے ہے اور سازشی عناصر مسلمانوں کو گمراہ کر رہے ہے انہوں نے کہا کہ قائد ملت جعفریہ حضرت آغا حامد علی شاہ الموسی النجفی نے 19نکاتی ضابطہ عزاداری جاری کر دیا ہے انہوں نے مطالبہ کیا کہ صوبائی سطح پر کنٹرول روم قائم کیا جائے اور عزاداروں کو درپیش دیگر مسائل سنجیددگی سے حل کیے جائے جبکہ محرم الحرام کے موقع پر فول پروف سیکورٹی ممکن بنائی جائے 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -