آٹا کی سمگلنگ روکنے کیلئے مانیٹرنگ مزید سخت کرنے کا فیصلہ 

  آٹا کی سمگلنگ روکنے کیلئے مانیٹرنگ مزید سخت کرنے کا فیصلہ 

  

لاہور(جنرل رپورٹر)  وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت آج سول سیکرٹریٹ میں اعلیٰ سطح کا اجلاس منعقد ہوا جس میں صوبے میں آٹے اور چینی کے نرخوں اور سٹاک کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ  صوبہ بھر میں 20 کلو آٹے کا تھیلا مقرر کردہ قیمت 860 روپے میں وافر دستیاب ہے اور پنجاب واحد صوبہ ہے جہاں عوام کو مقرر کردہ قیمت پر آٹے کا تھیلا مل رہا ہے۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے آٹا تھیلا سرکاری ریٹ پر عوام کو فراہم کرنے کے حوالے سے کئے گئے اقدامات پر اطمینان کا اظہار کیا۔ اجلاس میں صوبہ پنجاب سے آٹے کی سمگلنگ روکنے کیلئے مانیٹرنگ کو مزید سخت کرنے کیلئے ہر ممکن انتظامی اقدام اٹھانے کا فیصلہ کیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ پنجاب حکومت خیبرپختونخوا کے بہن بھائیوں کیلئے بھی روزانہ کی بنیاد پر گندم فراہم کر رہی ہے۔ پنجاب حکومت عوام کو مقررکردہ قیمت پر آٹا مہیا کرنے کیلئے اربوں روپے کی سبسڈی دے رہی ہے۔سبسڈی غریب عوام کا حق ہے جبکہ اشرافیہ کو آٹے پر سبسڈی ملنا غریب کا حق مارنے کے مترادف ہے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے آٹے کی سبسڈی کو ٹارگٹڈ بنانے کیلئے موثر میکانزم تشکیل دینے کی ہدایت کرتے ہوئے محکمہ خوراک سے ٹارگٹڈ سبسڈی کیلئے حتمی پلان طلب کر لیا۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت اب تک 6 لاکھ 69 ہزار ٹن گندم فلور ملوں کو ریلیز کر چکی ہے اور پنجاب کے پاس تقریباً 37 لاکھ ٹن گندم کے ذخائر موجود ہیں۔پنجاب حکومت روزانہ 17 ہزار ٹن سے زائد گندم فلور ملوں کو ریلیز کر رہی ہے جس سے مارکیٹ میں آٹے کی قیمت میں استحکام آیا ہے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے آٹے کی قیمت میں استحکام برقرار رکھنے کیلئے سخت مانیٹرنگ کی ہدایت کی۔ اجلاس میں چینی کے نرخوں میں استحکام کیلئے تمام ضروری انتظامی اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ آٹے اور چینی کی قیمتوں میں خود ساختہ اضافہ برداشت نہیں کروں گا۔ سیکرٹری خوراک نے صوبے میں گندم اور چینی کے ذخائر اور نرخوں کے حوالے سے بریفنگ دی۔ سینئر صوبائی وزیر عبدالعلیم خان، چیف سیکرٹری، سیکرٹری خوراک، پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ، سیکرٹری صنعت، سیکرٹری اطلاعات، سپیشل مانیٹرنگ یونٹ کے سربراہ اور متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔

عثمان بزدار

مزید :

صفحہ اول -