مقبوضہ کشمیرمیں اقدامات، پاکستان سے دہشتگردی کا بھارتی موقف پٹ چکا: شاہ محمود قریشی 

مقبوضہ کشمیرمیں اقدامات، پاکستان سے دہشتگردی کا بھارتی موقف پٹ چکا: شاہ ...

  

  اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں علم بغاوت بلند ہو گیا، فاروق عبداللہ سمیت سیاسی جماعتوں نے لاک ڈاون اور بھارتی اقدامات کی نفی کر دی۔ اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا بھارت کے لاک ڈاون کے غیرقانونی اقدام پر چین نے واضح موقف اپناتے ہوئے مقبوضہ کشمیر کو متنازع علاقہ قرار دیا ہے، بھارت کا موقف پٹ رہا ہے۔ چین نے کہا لداخ پر بھارتی موقف قبول نہیں۔ عالمی برادری مقبوضہ کشمیر کو بھارت کا اندرونی معاملہ تسلیم نہیں کرتی۔ کشمیریوں کو آج بھی مسائل کا سامنا ہے، ہزاروں کشمیری بھارتی قید میں ہیں، مودی سرکار کے اقدامات سے مقبوضہ کشمیر کی معیشت تباہ ہو گئی ہے، لاک ڈاون کے ذریعے بھارت کشمیریوں کو دبا رہا ہے۔ مسئلہ کشمیر کو عالمی قراردادوں کے مطابق حل ہونا چاہیے۔ کشمیر کے حالات سے عالمی برادری کو خبردار کرتے رہیں گے، بھارت کا بیانیہ تھا گھس بیٹھیے آتے ہیں،دہشت گردی ہے، پاکستان سے آکر لوگ شرارت کرتے آج اسے کوئی تسلیم نہیں کررہا۔ انٹرنیشنل کرائسس گروپ جو متنازع زون پر آزاد رائے رکھتے ہیں وہ مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کو بڑے پیمانے پر مزاحمت اور،مقامی قرار دینے سمیت مطالبہ کررہا ہے 5اگست 2019کے اقدامات کو واپس لیا جائے جبکہ یہی بات پاکستانی اور دنیا بھر میں موجود کشمیری بھی کہہ رہے ہیں۔ پاکستان نے دنیا کو جھنجھوڑا ہے اور جھنجھوڑتارہے گا،باخبر رکھا ہے اور رکھتا رہے گا کہ کشمیر سے متعلق پالیسی کی ناکامی پر بھارتی سرکار سے بعید نہیں کہ وہ کسی جھوٹے فلیگ آپریشن کا ناٹک رچائے۔ حق خود اردایت کی اس سیاسی مزاحمت کو پھر دہشت گردی سے تشبیہ دینے کی کوشش کرے اور اس کا الزام پاکستان پر لگادے۔

شاہ محمود قریشی

مزید :

صفحہ اول -