چینی کسٹمز نے 2ہزار ٹن سمگل شدہ فضلہ قبضے میں لے لیا

چینی کسٹمز نے 2ہزار ٹن سمگل شدہ فضلہ قبضے میں لے لیا
چینی کسٹمز نے 2ہزار ٹن سمگل شدہ فضلہ قبضے میں لے لیا

  

تھیان جن (شِنہوا)شمالی چین میں تھیان جن بلدیہ کی کسٹم نے 2ہزار ٹن سے زائد سمگل شدہ ٹھوس فضلہ قبضے میں لیا ہے، یہ بات کسٹمز نے منگل کے روز بتائی ہے۔یہ ٹھوس کچرا جو کہ صنعتی فاضل مواد ہے میں زنک شامل ہے جسے میکسیکو اور ملائیشیا سے اسمگل کیا گیا تھا، چین نے اس قسم کے ٹھوس فضلے کی درآمد پر پابندی لگائی ہے۔اس کیس میں 5 مشتبہ افراد کو مجرمانہ اقدامات کے تحت حراست میں رکھا گیا ہے اور مزید تحقیقات جاری ہیں۔

چین نے 1980کی دہائی میں ٹھوس فضلے کی خام مواد کے طور پر درآمد کا آغاز کیا تھا جس سے عوام میں ماحولیاتی آلودگی اور چین کی سبز ترقی کی مہم کے بارے میں عوامی خدشات کا اضافہ ہوا اور اس کے بعد ملک میں مرحلہ وار اس قسم کی درآمدات کو 2019 تک بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا تاہم ایسے ذرائع اس میں شامل نہیں جس کا متبادل موجود نہ ہوں۔

مزید :

بین الاقوامی -