جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کو قانونی حیثیت مل ہی گئی،50 دن بعد بزنس رولز منظور

جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کو قانونی حیثیت مل ہی گئی،50 دن بعد بزنس رولز منظور
جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کو قانونی حیثیت مل ہی گئی،50 دن بعد بزنس رولز منظور

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) پنجاب حکومت نے جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کیلئے 50 دن بعد بزنس رولز کی منظوری دے دی۔ذرائع کے مطابق جنوبی پنجاب میں 15 صوبائی محکموں کی تشکیل اور سیکرٹریز کی تعیناتی اور جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں محکمہ زراعت، محکمہ مواصلات و تعمیرات بنانے کی منظوری بھی دے دی گئی، پنجاب حکومت نے 13 اگست کو کابینہ کے ہونیوالے اجلاس کے منٹس آف میٹنگ کی منظوری بھی دیدی، ساوتھ سیکرٹریٹ میں محکمہ خزانہ، بلدیات، قانون، پی اینڈ ڈی اور آبپاشی کے محکمے بنانے کی منظوری بھی ہوگئی۔ساو¿تھ پنجاب میں ہائیر ایجوکیشن، سکول ایجوکیشن، سپیشل اور لٹریسی کا ایک ہی محکمہ ہوگا، ساو¿تھ پنجاب سیکرٹریٹ میں محکمہ صحت، لائیو سٹاک، جنگلات اور فشریز کے محکمے بنانے کی منظوری بھی دی گئی ہے، ساو¿تھ پنجاب سیکرٹریٹ کا الگ سے محکمہ داخلہ اور بااختیار سیکرٹری ہوگا، جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں بورڈ آف ریونیو اور سروسز اینڈ جنرل ایڈمنسٹریشن کے محکمے بھی ہوں گے۔جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کا ایڈیشنل چیف سیکرٹری کو چیف سیکرٹری پنجاب کی طرح مکمل اختیار حاصل ہوں گے، صوبائی وزراءساو¿تھ پنجاب سیکرٹریٹ کے محکموں کے وزیر رہیں گے، پنجاب پولیس بھی ایڈیشنل چیف سیکرٹری کی طرز پر ادارہ اور دفاتر قائم کرے گی۔دوسری جانب پنجاب حکومت نے جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں کام کرنے والے افسران و ملازمین کیلئے ڈبل تنخواہ کا اعلان کردیا، ایڈیشنل چیف سیکرٹری جنوبی پنجاب زاہدزمان نے تںخواہوں میں اضافے کی سمری ارسال کردی, کابینہ کمیٹی برائےفنانس کل تنخواہوں میں اضافی پیکج کی منظوری دے گی۔واضح رہے کہ ملتان میں پانچ سو کینال پر سیکرٹریٹ کا قیام اور جی او آر بنایا جائے گا، بہالپور میں 50 ایکڑ کے رقبے پر سیکرٹریٹ اور جی او آر بنے گا، ابتدائی طور پر پندرہ محکمے، ایجنسیز اور ماتحت ادارے بنائے جائیں گے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -