نئے بلدیاتی نظام سے نوکریوں کی نوید سنادی گئی،نیا آئی ٹی ونگ بھی بنے گا

نئے بلدیاتی نظام سے نوکریوں کی نوید سنادی گئی،نیا آئی ٹی ونگ بھی بنے گا
نئے بلدیاتی نظام سے نوکریوں کی نوید سنادی گئی،نیا آئی ٹی ونگ بھی بنے گا

  

 لاہور(ڈیلی پاکستان آ ن لائن)نئے بلدیاتی نظام سے نوکریوں کی نوید سنادی گئی،455بلدیاتی اداروں میں نیا آئی ٹی ونگ بھی تخلیق کیا جائے گا۔ اس حوالے سے چار مختلف کیٹگریز پر سینکڑوں بھرتیوں کا پلان تشکیل دینے کافیصلہ کیاگیا تمام بھرتیاں پنجاب پبلک سروس کمیشن کے تحت کی جائیں گی،محکمہ بلدیات پنجاب کی جانب سے نئے بلدیاتی ایکٹ کے تحت لاہور سمیت پنجاب بھر میں نیا بلدیاتی نظام نافذ کیا جا چکا ہے۔جس کے مطابق بلدیاتی ادارے بڑھا کر 455 کر دیئے گئے ہیں۔ جن میں ایڈمن، فنانس اور پلاننگ ونگز میں سینکڑوں نئی بھرتیاں کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، جبکہ نیا آئی ٹی ونگ بھی تخلیق کیا جائے گا ،جس میں ایم او آئی ٹی، ڈپٹی ایم او آئی ٹی اور کمیپوٹر آپریٹر کی نئی سیٹیں تخلیق ہوں گی۔ایڈمن، فنانس اور پلاننگ ونگ میں پی پی ایس سی کے ذریعے بھرتیاں کرنے کیلئے ریکوزیشن تیار کی جارہی ہے، جبکہ نئے آئی ٹی ونگ کیلئے سروس رولز میں تبدیلی کی جارہی ہے۔واضح رہے کہ سرکاری کالجوں میں بھی لیکچررز کی بھرتیوں کے لئے ضابطہ جاری کردیا گیا، ماسٹر ڈگری سیکنڈ ڈویڑن اور ایم اے انگریزی تھرڈ ڈویڑن کے حامل امیدوار اہل ہوں گے، لیکچررز کی اسامیوں پر بھرتیوں کے لئے 100 نمبروں پر مشتمل تحریری امتحان ہوگا، تحریری امتحان میں 80 فیصد متعلقہ مضمون سے اور 20 فیصد حصہ جنرل نالج پر مشتمل ہوگا۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -