آپ کے خیال میں یہ کیا ہو رہا ہے

آپ کے خیال میں یہ کیا ہو رہا ہے
آپ کے خیال میں یہ کیا ہو رہا ہے

  

بیجنگ (نیوز ڈیسک) چینی فوج دنیا کی سب سے بڑی آرمی ہے اور یہ صرف تعداد کے لحاظ سے ہی سرفہرست نہیں ہے بلکہ اس کی تربیت بھی غیر معمولی حد تک سخت ہے۔ آج کل ہمارے ہاں موسم بہت سرد ہے لیکن تبت کے علاقے میں 4500 میٹر کی بلندی پر ہر چیز برف کی دبیز تہہ میں دب چکی ہے۔ اخبار ”پیپلز ڈیلی“ میں شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق چینی فوج کو اس برف زار میں تربیت دی جارہی ہے۔ یہاں یہ فوجی دن کا آغاز کرتے ہی شرٹ اور بنیان وغیرہ اتاردیتے ہیں اور تمام ورزشیں اور تربیتی مراحل ننگے دھڑ ہی مکمل کرتے ہیں۔ اگرچہ ان کے جسم سردی سے سن ہوجاتے ہیں لیکن اس دوران انہیں برف سے بھرے برتنوں میں منہ دبانے کے مرحلے سے بھی گزرنا پڑتا ہے۔ اخبار کا کہنا ہے کہ اس تربیت کا مقصد ان فوجیوں کو برف سے ڈھکے پہاڑوں پر شدید سرد موسم کا مقابلہ کرنے کیلئے تیار کرنا ہے۔ تربیت کے دوران فوجی کھانا بھی برف پر بیٹھ کر ہی کھاتے ہیں اور تربیتی لیکچر بھی برف پر ہی ہوتے ہیں۔

مردوں کو بھی حاملہ پن کی علامات کا سامنا کر نا پڑتا ہے ،تحقیق میں انتہائی دلچسپ انکشاف

مزید :

بین الاقوامی -