سیکیورٹی خدشات، سرکاری سکولوں میں تعطیلات بڑھانے پر غور

سیکیورٹی خدشات، سرکاری سکولوں میں تعطیلات بڑھانے پر غور

  

لاہور(ذکاءاللہ ملک)سیکیورٹی خدشات کے پیش نظرمحکمہ ایجوکیشن کی طرف سے سرکاری سکولوں میںموسم سرما کی تعطیلات میں اضافہ کرنے اور شہر میں نجی اکیڈمیوں کو بھی بند کرنے کے فیصلے پر غور ۔محکمہ تعلیم کے ذرائع کے مطابق لاہور سمیت صوبہ بھرکے حساس علاقوں میں واقع سرکاری سکولوں میں سیکیورٹی معاملات کو بھرپور انداز سے ممکن بنانے اور اہم اقدامات کو یقینی بنانے کے باعث موسم سرما کی چھٹیوں کی مدت میں ردو بدل بھی کیا جا سکتا ہے،دوسری طرف شہر لاہور میں نجی اکیڈمیوں کے خلاف بھی آپریشن کرنے کا فیصلہ کیا جا رہا ہے جبکہ ایسی نجی اکیڈمیوں کی طرف سے اٹھائے جانے والے تسلی بخش سیکیورٹی اقدامات کے باعث انہیں درس و تدریس کا عمل جاری رکھنے کی اجازت دی جائے گی ۔ذرائع کے مطابق محکمہ ایجوکیشن کی طرف سے ایگزیکٹیو ایجوکیشن آفیسر،ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر ،ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر سمیت فیلڈ کے اہم افسران پر مشتعمل کمیٹیاں تشکیل دینے کا فیصلہ کیا جا رہا ہے جو شہر بھر میں شام کے وقت درس و تدریس کرنے والی اکیڈمیوں کی انسپکشن کریں گی اور سیکیورٹی کے غیر تسلی بخش اقدامات کی حامل اداروں کو فوری طور پر بند کرنے کی احکامات جاری کریں گی ۔زرائع کا مذید کہنا ہے کہ سیکیورٹی وجوہات کی بنا پر حکومت پنجاب کی خصوصی ہدایات پر محکمہ ایجوکیشن کی جانب سے صوبائی دارلحکومت کے سرکاری و نجی تعلیمی اداروں (جنمیں نجی اکیڈمیاں بھی شامل ہیں)میں میں سیکیورٹی کی منصوبہ بندی کے حوالے سے اہم فیصلے متوقع ہیں جبکہ سرکاری تعلیمی اداروں کی سیکورٹی کو بہتر بنانے ،سکولوں کی چاروں اطراف کی دیواروں کو اونچا کرنے اور خار دار تاریں لگانے سمیت سیکیورٹی گارڈز کی تعیناتی جیسے اقدامات کے باعث موسم سرما کی قبل از وقت ہونے الی چھٹیوں کے دورانیے میں اضافہ بھی کیا جا سکتا ہے۔سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر صبح اور شام کی شفٹ میں چلنے والے شہر بھر کے تمام فنی تعلیمی اداروں کو بھی بند کرنے کے احکامات جاری کئے جا چکے ہیں جبکہ لاہور کے تمام ٹاﺅنوں میں شام کے وقت چلنے والی اکیڈمیوں کو بند کرنے کے فیصلے پر بھی غور کیا جا رہا ہے۔

تعطیلات

مزید :

صفحہ آخر -