کلبھوشن سے والدہ اور اہلیہ کی ملاقات آج ، پاکستان نے قونصلر رسائی بھی دیدی

کلبھوشن سے والدہ اور اہلیہ کی ملاقات آج ، پاکستان نے قونصلر رسائی بھی دیدی

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان نے بھارتی خفیہ ایجنسی ’’را‘ ‘کے ایجنٹ کلبھوشن یادیو کو قونصلر رسائی دیدی۔بھارتی جاسوس سے ملاقات کیلئے انکی اہلیہ اور والدہ آج پاکستان پہنچیں گی جبکہ بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ بھی انکے ساتھ ہوں گے۔ جیو کے پروگرام ’نیا پاکستان‘ میں گفتگو کرتے ہوئے وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کہا کہ اگر بھارت ہماری جگہ ہوتا تو ہمیں یہ رعایت نہیں دیتا۔ان کا کہنا تھا کہ کلبھوشن کو بیوی اور والدہ سے ملاقات کی اجازت صرف انسانی ہمدردی کی بنیاد پر دی، جبکہ انہیں قونصلررسائی بھی دی جارہی ہے۔خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ عالمی عدالت میں کلبھوشن کے حوالے سے کیس جاری ہے، ہمیں ملاقات کرانے کامشورہ بھی دیاگیا، نہیں چاہتے کہ ملاقات کے معاملے میں ہمارے کیس میں کوئی کمزوری آئے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ کلبھوشن کی رحم کی اپیل اپنے مفادات، سکیورٹی کو مدنظر رکھ کر فیصلہ کرسکتے ہیں۔سفارتی ذرائع کے مطابق بھارت نے کلبھوشن کی اس کے والد اور والدہ سے ملاقات کرانے کا کہا تھا لیکن کلبھوشن نے کہا وہ اپنی اہلیہ سے ملنا چاہتا ہے اور پاکستان نے اسکی خواہش پوری کی۔ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے سوشل میڈیا پر اپنے پیغام میں بتایا کہ بھارت نے کلبھوشن کی والدہ اور اہلیہ کی پاکستان آمد کی تصدیق کردی ہے۔ذرائع کے مطابق کلبھوشن کے اہل خانہ کا آج رات ہی اسلام آباد پہنچنے کا امکان ہے، کلبھوشن کی والدہ اور اہلیہ رات بھارتی ہائی کمیشن میں قیام کریں گی، دونوں کل صبح کلبھوشن سے ملاقات کے بعد خصوصی طیارے سے واپس جائیں گی۔

کلبھوشن یادیو

مزید : صفحہ اول


loading...