جیل میں قیدی اپنا وقت ضائع نہ کریں چیف جسٹس بلوچستان ہائیکورٹ

جیل میں قیدی اپنا وقت ضائع نہ کریں چیف جسٹس بلوچستان ہائیکورٹ

  



حب( این این آئی)چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ محمد نور مسکانزئی نے کہا ہے کہ جیل میں قیدی اپنا وقت ضائع نہ کریں بلکہ کسی نہ کسی ہنر میں اپناوقت لگا کر جیل کی زندگی کے بعد اپنے خاندان کو حلال رزق دینے کے لئے جیل میں فراہم کی جانے والی فنی تربیت سے استعفادہ حاصل کریں تاکہ جیل کی رہائی کے بعدانہیں اپنی زندگی گزارنے میں آسانی ہو،چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ محمد نور مسکانزئی کا مزید کہنا تھا کہ قیدیوں میں مختلف روزگار سے متعلق فنی تعلیم میں مزید اضافہ بھی کیا جائے گا جس سے قیدیوں کو اپنا مستقبل بہتر بنانے میں مدد مل سکے قبل ازیں چیف جسٹس بلوچستان محمد نور مسکانزئی نے قیدیوں کومحکمہ محنت وافرادی قوت بلوچستان اور بلوچستان ٹیکنیکل ایجوکیشن اینڈووکیشنل ٹریننگ اتھارٹی کے تعاون سے گڈانی سینٹرل جیل کے قیدیوں کوفنی تربیت فراہم کرنے کے سینٹر کا فیتہ کاٹ کر افتتاح کیاچیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ محمد نور مسکانزئی نے گڈانی سینٹرل جیل کا دورہ کیا ،پروگرام کا مقصد قیدیوں میں حلا ل روزگاراور ہنر سے متعلق آگاہی فراہم کرنا تھا چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ محمد نور مسکانزئی کے دورے کے موقع پر ڈی سی لسبیلہ بشیر احمدمینگل سمیت ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج لسبیلہ عبدالقیوم لہڑی و دیگرافسران بھی موجود تھے۔

مزید : علاقائی


loading...