30سے زائد حکومتی ارکان اسمبلی کا استعفے دینے سے انکار ، الیکشن میں پارٹی کا ساتھ دینے کا اعلان

30سے زائد حکومتی ارکان اسمبلی کا استعفے دینے سے انکار ، الیکشن میں پارٹی کا ...

  



لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) بدلتی ہوئی ملکی سیاسی صورتحال کے پیش نظر ختم نبوتؐ کے معاملے پر 30 سے زائد حکومتی ارکان اسمبلی نے استعفے دینے کا ارادہ تبدیل کرلیا ہے۔ایکسپریس نیوز کے مطابق ملکی سیاسی صورتحال کے پیش نظر ختم نبوتؐ کے معاملے پر صاحبزادہ حمید الدین سیالوی کواستعفوں کی یقین دہانی کرانیوالے 30 سے زائد حکومتی ارکان اسمبلی نے استعفے دینے کا ارادہ تبدیل کرلیا ہے اورآئندہ الیکشن میں بھی مسلم لیگ ن کے ساتھ رہنے کا فیصلہ کرلیا۔ذرائع کے مطابق قادیانیوں کے ایشو پر وزیر قانون کے بیان پر پیر حمیدالدین سیالوی کو استعفوں کی یقین دہانی کرانے والوں میں محمد وارث کلو، عبدالرزاق ڈھلوں، مناظر حسین رانجھا، وزیر مملکت پیر امین الحسنات شاہ، رجب علی بلوچ، چودھری حامد حمید، ڈاکٹر ذوالفقار بھٹی، شیخ اکرم، ملک شاکر اعوان، شفقت حیات بلوچ شامل تھے۔ ان میں سے صرف 4 ارکان پنجاب اسمبلی اور2 ارکان قومی اسمبلی نے استعفے دیے تام باقی لوگوں نے بدلتی ہوئی سیاسی صورتحال کو مد نظر رکھتے ہوئے ن لیگ میں ہی رہنے کا فیصلہ کیاہے۔

استعفے

مزید : علاقائی


loading...