قائد اعظم نے برصغیر کے مسلمانوں کو غلامی سے نجات دلا کر انہیں ایک الگ وطن دیا: صدر آزاد کشمیر

قائد اعظم نے برصغیر کے مسلمانوں کو غلامی سے نجات دلا کر انہیں ایک الگ وطن ...

  



مظفرآباد(بیورورپورٹ)صدرآزادجموں وکشمیر سردار محمد مسعود خان نے کہا ہے کہ بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جنا ح نے برصغیر کے مسلمانوں کو غلامی سے نجات دلا کر انہیں ایک الگ وطن دیا۔ جہاں انہیں مذہبی آزادی کے ساتھ ساتھ معاشی وسماجی ترقی کے گراں قدر مواقع ملے۔قائد اعظم نے علامہ اقبال کے خواب کی تعبیر مسلمانوں کو دی اور انہیں ایک ایسا آزاد ملک دیا جہاں ان کی آنے والی نسلیں آزاد فضاؤں میں سانس لے سکیں گی۔ان خیالات کا اظہا ر انہوں نے بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح ؒ کے یوم پیدائش کے موقع پر اپنے پیغام میں کیا۔ سردار محمد مسعودخان نے کہا کہ قائداعظم مسلمانوں کے عالمی راہنما، عظیم قانون دان اور تاریخ ساز شخصیت تھے۔ قائداعظمؒ انگریز اور کانگرسی لیڈروں کی شاطرانہ چالوں سے بخوبی واقف تھے اور وہ سمجھتے تھے کہ یہ دونوں عناصر مسلمانان برصغیر کو ہمیشہ کیلئے غلامی کی زنجیر میں جکڑے رکھنا چاہتے ہیں۔ اسلیئے انہوں نے برصغیر کے مسلمانوں کو دوقومی نظریہ سے روشناس کرایا اور 23مارچ1940کو قراردادپاکستان منظور کروا کر برصغیر کے مسلمانوں کیلئے ایک علیحدہ وطن کے حصول کیلئے بھرپور جدوجہد شروع کردی ۔دشمنان پاکستان نے ہر ممکن کوشش کی کہ پاکستان کا حصول ناممکن ہو۔ اس مقصد کیلئے انہوں نے حضرت قائداعظمؒ کی راہ میں روڑے اٹکائے اور انہیں ہرطرح کا لالچ دیا لیکن بانی پاکستان نے ہر دشواری کا خندہ پیشانی سے مقابلہ کیا انہوں نے راست بازی، اصول پرستی اور لگن کے ساتھ انگریزوں اور ہندووں کے تمام مذموم عزائم کو ناکام بنا دیا۔ انہوں نے قرارداد پاکستان منظور ہونے کے سات سال کے اندر دنیا کے نقشے پر سب سے بڑی اسلامی ریاست قائم کرکے سب کو ورطہء حیرت میں ڈال دیا۔انہوں نے کہا بابائے قوم کشمیر کو پاکستان کیلئے انتہائی ناگزیر سمجھتے تھے ۔ اسی لئے انہوں نے کشمیر کو پاکستان کی شہ رگ قرار دیا ۔ انہوں نے کشمیریوں کی تحریک آزادی کی کھلے لفظوں میں حمایت کی۔ انہوں نے مسئلہ کشمیرکو حل کرنے کیلئے بھرپور کوششیں کیں ان کی یہ دلی خواہش تھی کہ کشمیر بھارتی تسلط سے آزاد ہوکرپاکستان کا حصہ بنے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...