رواں ماہ سیزنل انفلوئنزا کے شبہ میں 13 مریض نشتر ہسپتال میں رپورٹ ہوئے‘ محکمہ صحت

رواں ماہ سیزنل انفلوئنزا کے شبہ میں 13 مریض نشتر ہسپتال میں رپورٹ ہوئے‘ ...

  



ملتان(نمائندہ پاکستان)محکمہ صحت کی جانب سے سیزنل انفلوئنزا سے متاثرہ مریضوں کے اعداد و شمار جاری کیے گئے ہیں۔ترجمان(بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

محکمہ صحت ملتان کا کہنا ہے کہ رواں ماہ سیزنل انفلوئنزا اے ایچ ون این ون کے شبہ میں 13 مریض نشتر اسپتال رپورٹ ہوئے تھے۔جن میں بیشتر وائرس سے محفوظ تھے۔سینزنل انفلوئنزا سے ملتان کے صرف 3 مریض جاں بحق ہوئے۔مرنے والے 3 مریضوں دلشاد بی بی،نثار فاطمہ اور محمد امجد کا تعلق ملتان سے ہے۔تینوں مریضوں میں لیب رپورٹ کے ذریعے انفلوئنزا اے ایچ ون این ون کی تصدیق ہوئی۔نشتر اسپتال میں دم توڑنے والے تحصیل میلسی کے رہائشی سلیم میں انفلوئنزا اے ایچ ون این ون کی تصدیق نہیں ہوئی۔نشتر اسپتال میں اس وقت انفلوئنزا اے ایچ ون این ون میں مبتلا 4 مریض زیر علاج ہیں۔نشتر ہسپتال میں سیزنل انفلوئنزا کی مکمل ادویات اور ویکسی نیشن موجود ہے۔شہریوں میں اس وائرس کیخلاف بھرپور آگاہی مھم چلائی جارہی ہے۔سیزنل انفلوئنزا مریضوں کے سانس سے تیزی سے ہوا میں پھیلتا ہے۔شہری مرض سے بچنے کیلئے احتیاطی تدابیر اختیار کریں۔

انلفوئنزا

مزید : ملتان صفحہ آخر