ماڈل اریبہ قتل کیس ،ایک اور ملزم گرفتار، بھائی نے قبر کشائی کی درخواست دیدی

ماڈل اریبہ قتل کیس ،ایک اور ملزم گرفتار، بھائی نے قبر کشائی کی درخواست دیدی

  

 لاہور(کرائم سیل،مانیٹرنگ ڈیسک، ایجنسیاں) لاہور کے علاقے شیرا کوٹ میں پراسرار طور پر قتل ہونیوالی اریبہ کے بھائی زوہیب نے پولیس کو قبر کشائی کی درخواست دیدی۔ زوہیب کا کہنا ہے طوبیٰ اور اس کے ساتھیوں نے اریبہ کو ماڈلنگ کا جھانسہ دیکر پھنسایاجو اسے غلط کاموں میں لگانا چاہتے تھے راز فاش کئے جانے کے ڈر سے قتل کر دیا اریبہ کے بھائی زوہیب نے درخواست میں مطالبہ کیا ہے کہ اریبہ کی قبر کشائی کرائی جائے تاکہ وہ اسے آبائی شہر سیالکوٹ میں دفن کرسکیں۔ زوہیب کا کہنا ہے ملزمہ طوبیٰ اور اس کے ساتھی پیشہ ور ملزم ہیں جنہوں نے اریبہ کو ماڈلنگ کا جھانسہ دیکر اپنے جال میں پھنسایا۔ پولیس نے زوہیب کی درخواست کی روشنی میں تحقیقات شروع کر دی ہے۔ دوسری جانب پولیس نے اریبہ قتل کیس کی ابتدائی رپورٹ تیار کر لی ہے جس کے مطابق مقتولہ کے جسم پر تشدد کے نشانات نہیں پائے گئے۔ رپورٹ میں نشہ آور ادویات کی زیادتی سے اریبہ کی موت کے خدشے کا اظہار بھی کیا جا رہا ہے۔ پولیس کی جانب سے اریبہ کے پوسٹمارٹم کے بعد اس کے جسمانی اعضا فرانزک لیب کو بھجوائے جا چکے ہیں۔ فرانزک لیب رپورٹ کے بعد پتہ چلے گا کہ اریبہ کی موت کی وجہ کیا تھی۔ دوسری طرف نجی ٹی وی کے مطابق ملزمان سے تفتیش کے دوران پولیس کو اس گروہ کے مزید ارکان کا بھی پتہ چلا ہے جس پر پولیس کی جانب سے چھاپے مار کر ان کو گرفتار کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے ۔گزشتہ روز پولیس نے ملزمان عثمان اور اعجاز کی نشاندہی پر ایک نجی بینک کے ملازم جس کا نام فاروق بتایا جاتا ہے کو حراست میں لے لیا ہے اور اس سے تفتیش کی جا رہی ہے۔اس حوالے سے شیرا کوٹ پولیس کا کہنا ہے کہ یہ ایک منظم گروہ ہے اس کے ارکان کے حوالے سے معلومات دوران تفتیش پتہ چل گئی ہیں لیکن وہ تمام فرار ہو چکے ہیں ۔اس لیے ان کی گرفتاری میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔لیکن گروہ کے ارکان کی نشاندہی ہو چکی ہے جلد ہی تمام کو گرفتار کر لیا گے۔ابھی تک مزید کسی ملزم کو گرفتار نہیں کیا جا سکا۔ زیر حراست ملزمہ طوبیٰ کے دیگر ساتھیوں کی گرفتاری کیلئے مختلف مقامات پر چھاپے مارے جا رہے ہیں ف

مزید :

صفحہ آخر -