سندھ اسمبلی میں لوکل گورنمنٹ ترمیمی بل2015کثرت رائے سے منظور

سندھ اسمبلی میں لوکل گورنمنٹ ترمیمی بل2015کثرت رائے سے منظور

  

 کراچی ( سٹاف رپورٹر ) سندھ اسمبلی نے لوکل گورنمنٹ ترمیمی بل2015 کی کثرت رائے سے منظوری دے دی،پینل سسٹم ختم کرنے اور ہر شہری کو آزادانہ الیکشن میں حصہ لینے کی اجازت دینے کی سفارش،حلقہ بندیوں کو اختیار الیکشن کمیشن کو تقویض،ایم کیو ایم کے اعتراضات کو بھی بل میں شامل کر لیا گیا۔منگل کو سندھ اسمبلی کا اجلاس سپیکر اآغا سراج درانی کی زیر صدارت اجلاس منعقد ہو ا جس میں لوکل گورنمنٹ ترمیمی بل2015کثرت رائے سے منظور کر لیا گیا ، بل گذشتہ روزایوان میں صوبائی وزیر وزیر قانون سکندر میند ھرو نے پیش کیا تو ایم کیو ایم نے اعتراض کیا ، ایم کیو ایم کے اعتراض کو شامل کر کے بل منظور کر لیا گیا ، سکندر میندھرو نے ایوان کو بتایا کو الیکشن کمیشن کی طرف چاروں صوبوں کو ہدایات جاری کی گئی تھیں ان کو اور عدالتی احکامات کو مدنظر رکھ بل ترمیمی بل تیار کیا ،ترمیمی بل کا متن کہ یونین کمیٹیوں اور یوسیز کو وارڈزمیں تقسیم کر دیا گیا ، نئی حلقہ بندیوں کا اختیار الیکشن کمیشن کو ہو گا ، ہر شہری آزادانہ حیثیت میں بلدیاتی انتخابات میں حصہ لے سکے گا بلدیاتی انتخابات میں شامل پینل سسٹم ختم کر نے کی سفارش کی گئی ، یوسیز ،یونین اور وارڈ کی حد بندی ریونیو بلاک کے مطابق تحصیل کے اندر ہو گی ۔

مزید :

صفحہ اول -