بھارتی دارالحکومت میں روہت ویمولا اور کنہیا کمار کی حمایت میں ریلی

بھارتی دارالحکومت میں روہت ویمولا اور کنہیا کمار کی حمایت میں ریلی

  

نئی دہلی (اے پی پی) بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں حیدر آباد دکن میں خود کشی کرنے والے دلت طالب علم روہت ویمولا اور غداری کے الزام میں گرفتار جے این یو کی طلبا یونین کے صدر کنہیا کمار کی حمایت میں طلبا تنظیموں نے ریلیکا انعقاد کیا۔ بھارتی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق نئی دہلی میں طلبا تنظیموں نیحیدر آباد دکن میں خود کشی کرنے والے اور غداری کے الزام میں گرفتار جے این یو کی طلبا یونین کے صدر کے حق میں ریلی کا انعقاد کیاگیا ۔ ریلی میں کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی اور دہلی کے وزیر اعلی اروندکیجریوال نے بھی شرکت کی۔ راہول گاندھی نے ریلی کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ طلبا کی آواز کو دبایا جا رہا ہے۔ انھو ں نے کہا کہ آر ایس ایس اور بی جے پی چاہتی ہے کہ ملک میں ایک ہی نظریے کی حکمرانی ہو۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت اپنی ناکامیوں پر بات کرنے کو تیارہی نہیں ۔ ریلی سے خطاب کرتے ہوئے دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے وزیر اعظم نریندر مودی کو مشورہ دیا کہ وہ طلبا سے نہ الجھیں۔ انہوں نے کہا کہ جن نوجوانوں نے آپ کو وزیراعظم بنایا ہے وہ آپ سے ناراض ہو جائیں گے۔ واضح رہے کہ اس واقعے کے بعد ہندوستان کی حکمراں اور اپوزیشن جماعتیں آمنے سامنے آگئی ہیں۔ دوسری جانب حکومت کا موقف ہے کہ ملک دشمن سرگرمیوں کو برداشت نہیں کیا جائے گا ۔

مزید :

عالمی منظر -