نوجوان ڈاکٹرزبہتر مستقبل کیلئے رویوں میں مثبت تبدیلی لائیں:جنرل (ر) محمد اسلم

نوجوان ڈاکٹرزبہتر مستقبل کیلئے رویوں میں مثبت تبدیلی لائیں:جنرل (ر) محمد اسلم

  

لاہور( اپنے نامہ نگار سے)وائس چانسلر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز جنرل (ر) محمد اسلم نے کہا ہے کہ نوجوان ڈاکٹرز مستقبل کے چیلنجز سے بخوبی نبرد آزما ہونے کے لئے نہ صرف اپنے رویوں میں مثبت تبدیلی لائیں بلکہ جدید طبی ریسرچ پر فوکس کر کے مریضوں کا بہتر علاج معالجہ کرنے ،شہریوں کو مختلف امراض سے بچا نے اورصحت مند معاشرہ کے قیام میں اپنا کردار ادا کر سکیں۔ پی جی ایم آئی ، اے ایم سی اور ایل جی ایچ کو طب کی دنیا میں نمایاں مقام دلانے میں موجودہ پرنسپل پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود کی کاوشیں قابل قدر ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پوسٹ گریجوایٹ میڈیکل انسٹی ٹیوٹ کے چھٹے سالانہ سائنٹیفک سمپوزیم 2016کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ’’مریضوں کی بہترین دیکھ بھال ، تسلسل کے ساتھ‘ کے عنوان سے منعقدہ سمپوریم میں پی جی ایم آئی کے سابق پرنسپلز، پروفیسر طارق صلاح الدین، پروفیسر اعجاز احسن، پروفیسر آغا شبیر علی اور فیکلٹی ممبران سمیت ملک بھر سے ڈاکٹروں کے علاوہ امیر الدین میڈیکل کالج کے طلبہ کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ تقریب میں صحت سے متعلق جدید ریسرچ اور ٹیکنالوجی پر مبنی پوسٹرز کی نمائش اورکتب خانہ بھی سجایا گیا جس میں شرکاء نے گہری دلچسپی لی۔اپنے خطاب میں جنرل (ر) محمد اسلم نے کہا کہ انسانیت کی خدمت ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل سٹاف سے بہتر کوئی اور نہیں کر سکتا۔ یہ لوگ ایسے مریض ، جن کو بعض اوقات ان کے اپنے بھی بوجھ تصور کرتے ہیں،کا بلاامتیاز بے لوث علاج معالجہ کرتے ہیں اور پوری جانفشانی سے اپنے فرائض سر انجام دیتے ہیں۔ مجھے اس بات پر فخر ہے کہ پوسٹ گریجوایٹ میڈیکل انسٹی ٹیوٹ کے فارغ التحصیل نہ صرف پاکستان بلکہ دیگر ممالک میں بھی مریضوں کے علاج معالجہ سے اپنے ادارہ اوروطن عزیز کا نام بھی روشن کر رہے ہیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -