آرمی چیف سے متعلق زرداری کا بیان میڈیا سیل کی غلطی قرار، پیپلز پارٹی نے تحقیقات کا حکم دیدیا

آرمی چیف سے متعلق زرداری کا بیان میڈیا سیل کی غلطی قرار، پیپلز پارٹی نے ...

  

اسلام آباد (آئی این پی)پاکستان پیپلزپارٹی کے رہنماؤں نے سابق صدر آصف علی زرداری کے آرمی چیف کی ریٹائرمنٹ سے متعلق بیان کو پارٹی کے میڈیا سیل کی غلطی قرار دیتے ہوئے کہاہے کہ بغیر کلیئرنس بیان جاری کرنے والے شخص کاپتہ چلا لیاگیا ہے اور اس سلسلے میں تحقیقات بھی کی جارہی ہیں ،آصف علی زرداری نے خو د ایسا کوئی بیان جاری نہیں کیا، بیان کی وضاحت بھی جاری کردی گئی ہے ،آصف علی زرداری کا موقف ہے کہ ہم فوج کے ساتھ ہیں، ملک اور فوج کیلئے آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے اچھا نام کمایا۔ بدھ کو ایک انٹرویو میں پیپلز پارٹی کے سینئر رہنماء سینیٹر سعید غنی نے اس بات کا اعتراف کیاکہ پیپلز پارٹی کے میڈیا سیل کی غلطی سے سابق صدر آصف علی زرداری کا آرمی چیف کی ریٹائرمنٹ سے متعلق بیان جاری ہوا اورجس نے یہ بیان کلیئرنس لئے بغیر جاری کیا اس شخص کا پتہ بھی چلا لیا گیا ہے اور پارٹی کے اندر اس کی تحقیقات جاری ہیں، سینئر صحافی حامد میر کا یہ ٹویٹ بھی درست ہے کہ آصف علی زرداری نے ایسا کوئی بیان جاری نہیں کی۔ ایک سوال پر سعید غنی نے کہا کہ صرف فرحت اللہ بابر کو ہی پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زر داری کا بیان جاری کرنے کا اختیار حاصل ہے یہ اختیار اسلام آباد اور کراچی میں قائم میڈیا سیلز کو بھی نہیں ہے لیکن گزشتہ روز میڈیا سیل میں کام کرنے والے ایک شخص کا سابق صدر سے رابطہ ہوا تھا اور ان سے ہونے والی بات چیت کے تناظر میں ایک بیان جاری کر دیا گیا جس کی منظوری نہیں لی گئی تھی ، یہ ہماری غلطی ہے جس کا ہم اعتراف کرتے ہیں، اس بحث میں نہیں پڑنا چاہتے کہ آصف علی زرداری نے جو بیان دیا وہ درست ہے یا نہیں لیکن ایسا بیان کلیئرنس کے بغیر جاری نہیں ہونا چاہیے تھا اس کی تحقیقات کر رہے ہیں۔ دوسری طرف قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ اورپاکستان پیپلز پارٹی کے سیکرٹری اطلاعات قمر زمان کائرہ نے گزشتہ روز پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری کے بیان کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ آصف زرداری کا بیان کہاں سے آیا،ہم اس کی تحقیقات کرائیں گے،آصف علی زرداری کا موقف ہے کہ ہم فوج کے ساتھ ہیں، ملک اور فوج کیلئے آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے اچھا نام کمایا۔ قمر زمان کائرہ نے کہا کہ مسلم لیگ(ن) قانون سے بالاتر کیوں ہے، جبکہ گھر جانا اور قتل ہونا صرف ہمارے لئے ہے، ہم نے رینجرز کے کچھ اختیارات سے تجاوز کی نشاندہی کی جس پر ہنگامہ برپا ہو گیا ہے۔پیپلز پارٹی کے رہنماء و قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ نے کہا کہ احتساب سب کا ہونا چاہیے، ملک میں کوئی مقدس گائے نہیں ہے، ہم پارلیمنٹ کے ذریعے اداروں کی مضبوطی چاہتے ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -