نئے خیبر پختونخوا کے بعد نیا آزاد کشمیر بنائیں گے، مسلم لیگ ن کی دھاندلی روکنا چیلنج ہے: عمران خان

نئے خیبر پختونخوا کے بعد نیا آزاد کشمیر بنائیں گے، مسلم لیگ ن کی دھاندلی ...

  

کوٹلی(مانیٹرنگ ڈیسک) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ ن لیگ کی دھاندلی روکنا چیلنج ہے مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قراردادوں کی روشنی میں حل کرائیں گے اگر حکومت ملی تو صوبوں کو خود مختاری دیں گے ، آزاد احتساب کی راہ میں کسی کو رکاوٹ نہیں بننے دوں گا۔نئے خیبر پختونخوا کے بعد نیا آزاد کشمیر بنائیں گے،کوٹلی میں انتخابی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ ووٹرز کو لانے کی بجائے ن لیگ کی دھاندلی کی فکر ہوتی ہے ،اس کا کپتان اپنے امپائر کھڑے کرلیتا ہے اگر دھاندلی روک لی تو الیکشن میں جیت تحریک انصاف کی ہوگی ،بے ایمانی سے الیکشن جیتنے والے کرپشن نہیں چھوڑ سکتے چوری کا پیسہ ملک سے باہر یا پھر کرپٹ لوگوں کی جیب میں جارہا ہے عوام کا پیسہ کرپٹ لوگوں کی جیب میں جائے تو کوئی فائدہ نہیں جب تک کرپشن پر قابو نہیں پائیں گے ملک ترقی نہیں کرسکتا آزاد احتساب کے سامنے کسی کو رکاوٹ نہیں بننے دوں گا۔انہوں نے کہا کہ یہ وقت کشمیریوں کی تقدیر بدلنے کا ہے برطانیہ میں موجود پاکستانی واپس آنا چاہتے ہیں مگر کرپٹ نظام کی وجہ سے واپس نہیں آسکتے۔ مرکز میں حکومت ملی تو صوبوں کو خود مختاری دیں گے انسان جب اپنی زندگی کا خود فیصلہ کرتا ہے تووہ آزاد ہوجاتا ہے اور آزاد کشمیر کے فیصلے پہلے آزاد کشمیر میں اس کے بعد وفاق میں ہونگے اور مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے ذریعے حل کرائیں گے۔خیبر پختونخوا میں بلدیاتی اداروں کو 44 ارب روپے دیے آزاد کشمیر میں بھی بلدیاتی نظام کی اشد ضرورت ہے۔

مزید :

صفحہ اول -