بے ایمانی سے الیکشن جیتنے والے کبھی کرپشن نہیں چھوڑ سکتے ، عمران خان

بے ایمانی سے الیکشن جیتنے والے کبھی کرپشن نہیں چھوڑ سکتے ، عمران خان

  

 کوٹلی (آن لائن) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کہا ہے کہ بے ایمانی سے الیکشن جیتنے والے کبھی کرپشن نہیں چھوڑ سکتے۔ کرپشن کے خاتمے تک ملک کا کوئی مستقبل نہیں ہے۔ مسلم لیگ (ن) کی دھاندلی روکنا ایک چیلنج ہے ۔ مسلم لیگ (ن) کا کپتان کھیل کے دوران ایمپائر کو اپنے ساتھ ملا لیتا ہے۔ جب تک ملک میں بلدیاتی انتخابات صحیح نہیں ہوتے تب تک ملک ترقی نہیں کرے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کے روز کوٹلی آزاد کشمیر میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ چیئرمین عمران خان نے کہا کہ دھاندلی کرنا ن لیگ کی عادت ہے دھاندلی ان کے خون میں شامل ہے یہ اپنے بچوں کو بھی دھاندلی کرنے کا درس دیتے ہیں انہوں نے کہا کہ حکمران چوری کا پیسہ ملک سے باہر لے کر جارہے ہیں۔ جو پیسہ عوام پر لگانا ہے وہ سیاستدانوں کی جیبوں میں جائے تو کوئی فائدہ نہیں ہے انہوں نے کہا کہ دھاندلی سے اقتدار میں آنے والے کبھی کرپشن تو نہیں چھوڑ سکتے ہیں جب تک اس ملک سے کرپشن ختم نہیں ہوگی تب تک اس ملک کا کوئی مستقبل نہیں ہے بیون ملک رہنے والے کشمیری کرپشن کی وجہ سے ملک میں واپس نہیں آرہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ وزیراعظم نواز شریف کے خلاف نیب میں بارہ کیسز ہیں ان کو ڈر ہے کہ اگر ان کی حکومت ختم ہوگئی تو وہ سیدھا جیل میں جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کی چھ چھ بار باریاں آئی ہیں لیکن انہوں نے اس ملک میں آکر اپنی جائیدادیں بڑھائی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جدہ میں نواز شریف کی سٹیل مل فائدے میں جارہی ہے جبکہ پاکستان مین اسٹیل مل بند پڑی ہے یہ اداروں کو تباہ کرنے کیلئے پہلے ان میں کرپشن کرتے ہیں بعد میں ان کی نجکاری کردیتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کے پی کے میں سب سے کم کرپشن ہوئی ہے ہم نے کے پی کے ہسپتال سکول سب کو بہتر کیا ہے کے پی کے میں اگر کوئی احتساب کے سامنے رکاوٹ ہے تو اس کو دور کرتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہاکہ جب تک اس ملک میں بلدیاتی انتخابات صحیح نہیں ہوتے یہ ملک ترقی نہیں کرے گا۔ اسی طرح آزاد کشمیر کو بھی ایک بلدیاتی نظام کی ضرورت ہے۔ کشمیر کی عوام کے مسائل بلدیاتی سطح پر ہی حل ہوں گے ہم نے کے پی کے میں بلدیات کے 144 ارب دیئے اس طرح کشمیر کی عوام کے مسائل بھی حل کریں گے

مزید :

پشاورصفحہ اول -