لاہور ہائی کورٹ میں بیوی اور سالی نے بداخلاقی کے ملزم کو "پھینٹی "لگا دی

لاہور ہائی کورٹ میں بیوی اور سالی نے بداخلاقی کے ملزم کو "پھینٹی "لگا دی
لاہور ہائی کورٹ میں بیوی اور سالی نے بداخلاقی کے ملزم کو

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ میں سالی سے مبینہ اخلاقی کے ملزم کی بیوی اور سالی نے دھنائی کردی ۔ضمانت کے لئے عدالت سے رجوع کرنے والے ملزم صفدر کی بیوی اور سالی نے مل کر احاطہ عدالت میں اس پر تھپڑوں کی بارش کر دی۔پولیس اہلکار تھوڑی دیر تک ملزم کی خواتین کے ہاتھوں درگت بنتے دیکھتے رہے تاہم بعد میں معاملے کو رفع دفع کروادیاجبکہ عدالت نے ملزم کی درخواست ضمانت پر متعلقہ تھانے سے مقدمے کا ریکارڈ طلب کر لیاہے۔مسٹر جسٹس شہزاد احمد ملک کے روبرو ملزم صفدر کی طرف سے موقف اختیار کیا گیا کہ اس کی بیوی نے گھریلو رنجش کی بناءپر اس پر بدکاری کا الزام عائد کیا ہے ،اس کی درخواست ضمانت منظور کی جائے۔خاتون صفیہ نے عدالت کو آگاہ کیا کہ اس کے خاوند صفدر نے گھر میں اپنی سالی سکینہ کو اکیلا دیکھ کر زبردستی بداخلاقی کا نشانہ بنا ڈالا۔انہوں نے کہا کہ ملزم کا فعل اسلامی،قانونی اور معاشرتی قوانین کی سنگین خلاف ورزی ہے لہذا سکے خاوند کی درخواست ضمانت مسترد کی جائے۔عدالت نے تھانہ صدر قصور کے ایس ایچ او کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 3 مارچ کو مقدمے کا ریکارڈ پیش کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے سماعت ملتوی کر دی۔عدالتی سماعت کے بعد ملزم جونہی کمرہ عدالت سے باہر نکلا تواس کی بیوی صفیہ اور اس کی بہن سکینہ نے ملزم پر تھپڑوں کی بارش کر دی۔عدالتی سکیورٹی پر مامور پولیس اہلکارکچھ دیر تک خاموش تماشائی بنے رہے تاہم بعد میں مداخلت کرتے ہوئے معاملے کو رفع دفع کرا دیا۔

مزید :

لاہور -