پارلیمانی جماعتیں فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع پر متفق نہ ہوسکیں

پارلیمانی جماعتیں فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع پر متفق نہ ہوسکیں

اسلام آباد(اے این این ) پارلیمانی جماعتیں کئی اجلاسوں کے باوجود بھی فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع کے معاملے پر متفق نہ ہوسکیں اورمعاملہ دوبارہ وزیرقانون زاہدحامدکی سربراہی میں قائم ذیلی کمیٹی کے سپرد کر دیا گیا ہے ۔سپیکر قومی اسمبلی سردارایازصادق نے ذیلی کمیٹی کو پارلیمانی رہنماؤں کے اجلاس میں طے پانے والے نکات پر مشتمل مسودے کو حتمی شکل دینے کی ہدایت کی ہے۔ اب پارلیمانی رہنماؤں کااگلااجلاس منگل کوہوگا ۔ فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع کے معاملے پر پارلیمانی رہنماؤں کا اجلاس سپیکرقومی اسمبلی سردار ایاز صادق کے زیرصدارت ہوا۔پیپلزپارٹی نے بائیکاٹ ختم کرتے ہوئے اجلاس میں شرکت کی اورسیدنوید قمر نے پارٹی کی نمائندگی کی۔ اجلاس میں فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع سے متعلق مسودہ قانون پرغورکیاگیا معاملہ ایک بار پھر پارلیمنٹ کی ذیلی کمیٹی کے سپرد کر دیا گیا ۔ اپوزیشن جماعتیں فوجی عدالتوں کے ساتھ نگراں کمیٹی کی بحالی کے مطالبے پر قائم ہیں، پیپلز پارٹی، ایم کیو ایم، تحریک انصاف اور دیگر سیاسی جماعتوں نے نگراں کمیٹی کے قیام پر زور دیا ہے۔ حکومت کی اتحادی جمعیت علماء اسلام ( ف) کے سربراہ مولانافضل الرحمن نے کہاہے کہ فوجی عدالتوں کی اب اشدضرورت ہے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...