چیئرنگ کراس دھماکا : دہشتگردوں کو پاکستان سے سہولت کار ملا نہ خودکش بمبار

چیئرنگ کراس دھماکا : دہشتگردوں کو پاکستان سے سہولت کار ملا نہ خودکش بمبار
چیئرنگ کراس دھماکا : دہشتگردوں کو پاکستان سے سہولت کار ملا نہ خودکش بمبار

  


لاہور (ویب ڈیسک) چیئرنگ کراس خودکش حملے کیلئے دہشتگردوں کو پاکستان سے کوئی سہولت کار ملا نہ خودکش بمباربلکہ اس مقصد کیلئے افغان باشندوں کو استعمال کیا گیا۔

نوائے وقت کے مطابق لاہور کے چیئرنگ کراس دھماکے کے حوالے سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ دہشتگردوںکو ا س خونریزی کیلئے پاکستان سے کوئی سہولت کار ملا نہ خودکش بمبار بلکہ انہوں نے حملے میں سہولت کاری اور خود کو اڑانے کیلئے افغان باشندوں کو آلہ کار بنایا ۔اد ھرڈیفنس دھماکہ کے بعددہشت گردوں نے سوشل میڈیا کے ذریعے عوام میں خوف و ہراس پھیلانے کی کوششیں کیں۔ آئی ایس پی آر سے منسوب کرکے وائس میل چلائی گئیں جبکہ پولیس ناکہ پر بھاگنے والے کو موقع پر گولی مارنے کا میسج بھی چلایا گیا۔

پاکستان سپر لیگ کا فائنل لاہور میں کرانے کے راستے پر ہیں : نجم سیٹھی

آئی ایس پی آر نے باضابطہ وضاحت کی کہ ا±ن کی جانب سے کوئی وائس میل یا میسج جاری نہیں کیا گیا اور اگر کوئی میسج دیا جائے گا تو آئی ایس پی آر کی آفیشل ویب سائٹ پر جاری ہو گا۔

باکسر محمد علی کے بیٹے کو حراست میں لیے جانے کا انکشا ف

اس حوالے سے آئی جی پولیس نے واضح کیا ہے کہ ناکہ پر نہ ر±کنے والے کو گولی مارنے کا حکم نہیں دیا گیا ہے بلکہ ناکہ پر موجود پولیس کو ہدایت ہے کہ ہر ایک سے نرمی سے پیش آئیں۔ کسی شہری کو ناکہ پر موجود پولیس روئیے سے شکایت ہو تو 8787 پر کال کر سکتے ہیں۔

مزید : لاہور


loading...