باجوڑ کے باشندے کو تخت بھائی میں قتل کردیا گیا

باجوڑ کے باشندے کو تخت بھائی میں قتل کردیا گیا

باجوڑ ایجنسی ( نمائندہ خصوصی )ذرائع کے مطابق مقتول ایک پراجیکٹ میں ملازم تھا اور تنخواہوں کی ادائیگی کیلئے اسلام آباد گیا جہاں محکمے نے اُن کو پچھلے چھ مہینوں کی تنخواہیں یک مُشت ادا کی جس کے بعد وہ اسلام آباد سے تخت بھائی اپنے رشتہ داروں کے گھر آیا جہاں سے رخصتی کے بعد نامعلوم افراد نے موصوف کو راستے میں پیدل جاتے ہوئے فائرنگ کا نشانہ بنایا مقتول ایم ایس سی ڈگری ہولڈر تھا اور کچھ مہینے قبل ایک پراجیکٹ میں ملازمت اختیار کی تھی مقتول کے میت کو باجوڑ ایجنسی منتقل کیا گیا جہاں وہ اپنے علاقے یوسف آباد میں سپُرد خاک کیا گیایاد رہے کہ گزشتہ ہفتے باجوڑ ایجنسی کے ایک اور طالب العلم کو کراچی میں نامعلوم افراد کے ہاتھوں قتل کیا گیا تھاجس کے قاتلوں کو ابھی تک گرفتار نہیں کیا گیا ہے باجوڑ ایجنسی کے سیاسی ، سماجی حلقوں ،یوتھ جرگے اور متحدہ طلباء محاذ نے مقتول کے بہیمانہ قتل پر غم وغصے کا اظہار کیا ہے اور حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ باجوڑ ایجنسی سے باہر پڑھنے والے طلباء اور کاروباری جوانوں کو تحفظ فراہم کیا جائے ۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی /پشاورصفحہ آخر