شام میں 1 ہفتے کے دوران 500 مسلمانوں کی شہادت کے بعد بالآخر وہ خبر آگئی جس کا ہر کسی کو انتہائی بے صبری سے انتظار تھا

شام میں 1 ہفتے کے دوران 500 مسلمانوں کی شہادت کے بعد بالآخر وہ خبر آگئی جس کا ہر ...
شام میں 1 ہفتے کے دوران 500 مسلمانوں کی شہادت کے بعد بالآخر وہ خبر آگئی جس کا ہر کسی کو انتہائی بے صبری سے انتظار تھا

  

دمشق(مانیٹرنگ ڈیسک) شام میں جاری جنگ اب تک ہزاروں مسلمانوں کو نگل چکی ہے اور گزشتہ ایک ہفتے میں درجنوں بچوں سمیت 500سے زائد شہری جاں بحق ہوئے۔ اب اقوام متحدہ نے ایسا قدم اٹھا لیا ہے جو اس صورتحال کے پیش نظرہر مسلمان کی خواہش تھی۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ نے متفقہ طور پر شام میں 30دن کے لیے فائربندی کی قرارداد منظور کر لی ہے۔

یہ قرارداد دو روز قبل پیش کی گئی تاہم روس کی حمایت حاصل کرنے کے لیے اس کی منظوری میں تاخیر ہوئی۔ اس قرارداد میں کہا گیا ہے کہ ”شام میں 30دن تک فائربندی رہے گی تاکہ امدادی سامان متاثرین تک پہنچ سکے اور زخمی شہریوں کو وہاں سے نکال کر ان کا علاج کیا جا سکے۔“ رپورٹ کے مطابق اس وقت شام کی حکومتی افواج اور باغیوں میں گھمسان کا رن پڑا ہوا ہے اور افواج باغیوں سے دمشق کے گردونواح کا علاقہ بازیاب کرانے کے لیے شدید بمباری کر رہی ہیں جس سے گزشتہ ایک دن میں کئی بچوں سمیت 35عام شہری لقمہ اجل بن چکے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی