سندھ ،سرکاری سطح پر مائیکروبیالوجیکل کیمیکل ٹیسٹ کی سہولت ہی موجود نہیں

سندھ ،سرکاری سطح پر مائیکروبیالوجیکل کیمیکل ٹیسٹ کی سہولت ہی موجود نہیں

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) کراچی کے سرکاری گیسٹ ہاؤس میں 5 بچوں اور خاتون کی موت کیسے ہوئی؟ تحقیقات نے نیا موڑ لے لیا، کھانوں اور لاشوں سے حاصل شدہ نمونے اور کمرے سے ملنے والے شواہد مختلف لیبارٹریوں کو بھیج دئیے گئے جہاں یہ انکشاف ہواکہ سندھ میں سرکاری سطح پر کیمیکل اور مائیکروبیالوجیکل ٹیسٹ کی سہولت موجود نہیں ہے۔ لاشوں کی آنتوں، معدے، خون اور جگر کے مختلف حصے کیمیکل ایگزامن کیلئے پنجاب فرانزک لیب لاہور بھیجے جائیں گے۔ ماہرین کہتے ہیں کہ گیسٹ ہاؤس کے کمرے میں کیمیکل مواد پایا گیا۔ کمرے سے ملنے والی کھٹمل مار دوا ایلمونیم فاسفائیڈ اور دیگر7 شواہد ٹیسٹ کے لیے جامعہ کراچی کے شعبہ آئی سی سی بی ایس کو بھیج دیے گئے ہیں۔دوسری جانب سندھ فوڈ اتھارٹی نے خوراک کے 33 نمونے ٹیسٹ کے لیے نجی لیبارٹری بھیج دئیے ہیں۔

مزید : صفحہ اول


loading...