مردان چیمبر آف سما ل ٹریڈ ز سمال انڈسٹر یز تاجر برادری کے حقوق کے حصوک کیلئے سرگرم

مردان چیمبر آف سما ل ٹریڈ ز سمال انڈسٹر یز تاجر برادری کے حقوق کے حصوک کیلئے ...

رستم(امین اللہ سے) تاجر برادری کسی بھی ملک کی ترقی اور مضبوطی میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے ملک کو مسائل کے دلدل سے نکالنے اور ترقی کی راہ پر گامزن کرنے میں سب سے زیادہ ٹیکس تاجر برادری ہی دیتے ہیں ، تاجر تنظیموں کے ذریعے معمولی کاروبار کو وسعت ملتی ہے جبکہ تاجروں کے مسائل کے فوری حل کیلئے تاجر تنظیمیں ہمہ وقت میدان میں مصروف عمل رہتے ہیں ، اس کے باوجود بھی حکومتی نظر کرم سے پناہ تاجربرادری گوناگوں مسائل سے دوچار ہیں، مردان کے تاجربرادری کے مسائل معلوم کرنے اور انہیں متعلقہ حکام تک پہنچانے کیلئے رستم میڈیا کلب میں مردان چیمبر آف سمال ٹریڈز اینڈ سمال انڈسٹریز کے عہدیداروں کے ساتھ ایک فورم کا انعقاد کیا گیا جس میں صدر نواز خان ماندوری، سینئر نائب صدر حافظ محمد داؤد، نائب صدور شاہجہان یوسفزئی، وحید اللہ، جنرل سیکرٹری غلام حسین، سیکرٹری اطلاعات عبدالزر ، فنانس سیکرٹری حاجی محمد سراج، ایگزیکٹیو کمیٹی ممبر حاجی اختر نواز خان اور جنید ماندوری نے شرکت کرکے موجودہ صورتحال کے پیش نظر تاجر برادری کے مسائل بیان کئے انہوں نے کہا کہ سابق تحصیل ناظم اور ممتاز سماجی شخصیت حاجی احسان باچہ کی کاؤشوں سے 2015ء میں مردان چیمبر آف سمال ٹریڈز اینڈ سمال انڈسٹریز کا قیام عمل میں لایا گیا جس کے تحت چھوٹے کاروبار والے تاجر برادری کو ایک منظم پلیٹ فارم کے ذریعے اپنے کاروبار کی تحفظ اور وسعت کا موقع مل گیا ، اس کے علاوہ مردان سمال چیمبر اینڈ انڈسٹریز وقتاً فوقتاً تاجر برادری کے مسائل جو انکم ٹیکس یا پولیس سے متعلق ہو اس کو فوری حل کرکے تاجربرادری کا ساتھ دے رہے ہیں، فورم میں بتایا گیا کہ حکومت کی جانب سے مسلسل نظر انداز کرنے اور قسم قسم طریقوں سے کاروبار کو متاثر کرنے کے ذریعے کارخانوں کو بند کرنا پڑتا ہے گدون انڈسٹرئل اسٹیٹ میں پہلے چار سو کارخانے چل رہے تھے جن میں لاکھوں کی تعداد میں لیبر روزگار پر تھے لیکن بجلی ، گیس بحران کے علاوہ غیرقانونی ٹیکسز لگانے سے آج صرف درجن بھر کارخانے چل رہے ہیں جس کی وجہ سے لاکھوں مزدور بیروزگار ہوچکے ہیں حکومت کی جانب سے ایک کروڑ نوکرویوں کے دعوے جھوٹے ثابت ہوگئے ، ایک طرف مردان سمیت پورے ملک کی تاجر برادری ہر قسم ٹیکس جمع کررہی ہے لیکن پھر بھی حکومت اور انتظامیہ کی جانب سے انہیں کوئی ریلیف نہیں دیا جارہا اس کے بدلے تاجر تنظیمیوں سے منشیات فروش اور جرائم پیشہ عناصر جیسا سلوک کیا جارہا ہے گزشتہ دنوں مردان میں لوکل انتظامیہ نے تاجر تنظیموں کے ساتھ جو ناروا سلوک کیا تھا اس کو ہر گز برداشت نہیں کریں گے تاجروں کے حقوق کے حصول کیلئے ہر فورم پر آواز اُٹھائیں گے ، فورم میں بتایا گیا کہ تحصیل رستم کے تاجربرادری کے حقوق کے حصول کیلئے مین بازار رستم میں تنظیمیں قائم کریں گے جس کی قیادت مردان سمال چیمبر کے ایگزیکٹیو ممبر حاجی اختر نواز خان کریں گے، انہوں نے بتایا کہ تاجر برادری کو درپیش مسائل اور چیلنجز کے خاتمے کیلئے بہت حکومتی حکام سے میٹنگ کریں گے جس میں تمام مسائل کے حل کیلئے ان پر زور دیا جائے گا تاکہ معمولی نوعیت کاروبار والے بھی سکھ اور چین کے ساتھ بغیر کسی خوف و خطر اپنے کاروبار کو وسعت دیکر ملکی معیشت کو مزید مستحکم کرنے میں اپنا کردار ادا کریں، فورم کے آخر میں شرکاء نے رستم میڈیا کلب کے جملہ ممبران کا خصوصی شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے تاجربرادری کے مسائل سننے اور حکام تک پہنچانے میں کردارادا کیا۔۔۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...