العزیزیہ ریفرنس، نواز شریف کی طبی بنیاد پر ضمانت کی درخواست مسترد

العزیزیہ ریفرنس، نواز شریف کی طبی بنیاد پر ضمانت کی درخواست مسترد
العزیزیہ ریفرنس، نواز شریف کی طبی بنیاد پر ضمانت کی درخواست مسترد

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) اسلام آباد ہائیکورٹ نے سابق وزیراعظم نواز شریف کی طبی بنیاد پر ضمانت کی درخواست مسترد کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی پر مشتمل اسلام آباد ہائیکورٹ کے دو رکنی بینچ نے 20 فروری کو محفوظ کیا گیا فیصلہ سناتے ہوئے ان کی ضمانت کی درخواست مسترد کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف کو تمام طبی سہولیات دی جا رہی ہیں لہٰذا انہیں طبی بنیاد پر ضمانت نہیں دی جا سکتی۔

واضح رہے کہ نواز شریف نے طبی بنیادوں پر سزا معطل کر کے ضمانت پر رہائی کی استدعا کر رکھی تھی جبکہ نیب نے نواز شریف کو ضمانت پر رہا کرنے کی مخالفت کی تھی۔

مطابق مسلم لیگ (ن) کے کارکنان کی آمد کے پیش نظر اسلام آباد ہائیکورٹ کے باہر اضافی نفری تعینات کی گئی اور سیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے جس کے تحت عدالت کے باہر سپیشل برانچ کے اہلکار بھی تعینات ہوئے۔

یاد رہے کہ اسلام آبادہائیکورٹ نے 20 فروری کو نواز شریف کی العزیزیہ ریفرنس میں احتساب عدالت کی جانب سے دی گئی 7 سال قید کی سزا کے خلاف دائر درخواست پر فیصلہ محفوظ کیا تھا۔

مزید : Breaking News /اہم خبریں /قومی


loading...