بلند وبالا کمرشل عمارتوں میں خصوصی افراد کی رسائی آسان بنانے کا فیصلہ

بلند وبالا کمرشل عمارتوں میں خصوصی افراد کی رسائی آسان بنانے کا فیصلہ

  



لاہور(جنرل رپورٹر) کثیر المنزلہ عمارتوں، کمرشل پلازوں اورپبلک بلڈنگز کے مالکان کو ہدایت کی ہے کہ وہ ان عمارتوں میں واقع دفاتر، شورومز اور دیگر کاروباری مقامات تک خصوصی افراد کی رسائی آسان بنانے کا فیصلہ۔ خصوصی افراد کے کسی مشکل اور تکلیف کے بغیر ان عمارتوں کے اندر جانے، وہاں بآسانی اپنے ضروری کام انجام دینے اور واپس جانے میں حائل مشکلات اور رکاوٹیں دور کریں۔ایل ڈی اے نے کمرشل پلازوں کے مالکان سے کہا ہے کہ ان عمارتوں میں خصوصی افراد کے لئے ویل چیئر ریمپ اور ان کی ضروریات کو سامنے رکھتے ہوئے خصوصی واش رومز اور ٹائیلٹس تعمیر کریں۔ایل ڈی اے بلڈنگ اینڈ زوننگ ریگولیشنز 2019ء کی دفعہ5.2.3 کے تحت کثیر المنزلہ عمارتوں، کمرشل پلازوں اور پبلک بلڈنگز میں خصوصی افراد کے لیے ریمپ اور ٹائلٹس تعمیر کرنا ضروری ہے، ایسا نہ کرنا قانون کی خلاف ورزی ہے۔ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی نے اپنی رہائشی سکیموں اور کنٹرولڈ ایریا میں واقع کثیر المنزلہ عمارتوں، کمرشل پلازوں اور پبلک بلڈنگز کے مالکان کو خبردار کیا ہے کہ جن مالکان نے منظورشدہ نقشے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے خصوصی افراد کے لئے ریمپ اور پبلک ٹوائلٹس تعمیر نہیں کئے وہ سات روز کے اندر اندر اس خلاف ورزی کو دور کریں ورنہ ان کے خلاف قانون کے تحت کاروائی کی جائے گی اور کوئی عذر قابل قبول نہیں ہوگا۔

فیصلہ

مزید : میٹروپولیٹن 1