کیماڑی زہریلی گیس ہلاکتیں معاملہ، صوبائی، وفاقی حکومت کو نوٹس، جواب طلب

  کیماڑی زہریلی گیس ہلاکتیں معاملہ، صوبائی، وفاقی حکومت کو نوٹس، جواب طلب

  



کراچی(این این آئی)سندھ ہائی کورٹ نے کیماڑی میں مبینہ زہریلی گیس سے ہلاکتوں پر صوبائی و وفاقی حکومت کو نوٹس جاری کرتے ہوئے فریقین سے 11 مارچ تک جواب طلب کرلیا ہے۔پیرکوسندھ ہائی کورٹ میں کیماڑی میں مبینہ زہریلی گیس سے ہلاکتوں سے متعلق درخواست کی سماعت ہوئی،درخواست عبدالجلیل خان مروت ایڈووکیٹ نے دائر کی ہے۔درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ کیماڑی میں زہریلی گیس کے اخراج سے 14 لوگوں کی اموات ہوچکی ہیں جبکہ تقریبا 100افراد متاثر ہوئے ہیں۔درخواست میں کہا گیا ہے کہ واقعے پروزیر پورٹس اینڈ شپنگ، کے پی ٹی اور سندھ حکومت میں رابطوں کا فقدان رہا،وزیر پورٹس اینڈ شپنگ کراچی میں کچرا صاف کرنے کیلئے چندے میں مصروف دکھائی دیتے ہیں،کچرے کے نام پر پیسے تو بٹورے گئے لیکن اسکی اپنی منسٹری کی غفلت سے بے گناہ لوگوں کی جانیں چلی گئیں۔عدالت میں دی جانے والی درخواست میں کہا گیا ہے کہ زہریلی گیس سے اموات واقع ہوئیں لیکن کوئی ذمہ داری نہیں لے رہا،واقعے کی شفاف اور مکمل تحقیقات کرائی جائے اور تعین کیا جائے کہ واقعے کا ذمہ دار کون ہے، ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی جائے اور متاثرین کو معاوضہ دیا جائے۔جس پر عدالت نے صوبائی و وفاقی حکومتوں سمیت سندھ انوائرنمنٹل ایجنسی، چیئرمین کے پی ٹی و دیگر کو نوٹسز جاری کردئیے ہیں۔عدالت نے درخواست پر کہا کہ یہ اہم معاملہ ہے، صوبائی اور وفاقی حکومتوں کا جواب آنے دیں۔ بعد ازاں عدالت نے تمام فریقین سے 11 مارچ تک جواب طلب کر لیا۔

کیماڑی گیس معاملہ

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) کراچی کے علاقے کیماڑی میں 14 افراد کی ہلاکت پر 6 رکنی کمیٹی بنا دی گئی، دنیا نیوز نے تحقیقاتی ٹیم کے آرڈر کی کاپی حاصل کر لی۔کیماڑی میں 14 افراد کی ہلاکت اور سینکڑوں متاثرین کا معاملہ، اعلیٰ پولیس حکام نے ملوث افراد کی گرفتاری کے احکا مات جاری کر دئیے۔ پولیس حکام کے مطابق معاملے کی تحقیقات کیلئے 6 رکنی ٹیم کی ایس ایس پی سٹی مقدس حیدر تحقیقاتی کمیٹی کی سربراہی کریں گے، ایس پی کیماڑی، ایس پی انوسٹی گیشن مختیار خاصخیلی ٹیم میں شامل ہیں۔ تحقیقاتی ٹیم تحقیقات میں واقعے میں ملوث عناصر کو نشا ند ہی کے بعد گرفتار کرے گی۔

کمیٹی تشکیل

مزید : صفحہ آخر