قطب پور‘ اندھا قتل ٹریس‘ دو ملزم گرفتار‘ تحقیقات شروع

  قطب پور‘ اندھا قتل ٹریس‘ دو ملزم گرفتار‘ تحقیقات شروع

  



ملتان ( وقا ئع نگار ) پولیس تھانہ قطب پور نے 3 ہفتے قبل اندھے قتل کو ٹریس کر لیا۔کوڑے کے ڈھیڑ سے ملنے والی لاش کی وجہ موت پوسٹ مارٹم میں گلہ دبانے سے ثابت ہوگئی۔جبکہ پولیس نے گرفتار ملزمان کے ساتھ مقتول کا لین دین کا تنازعہ قرار دیا ہے۔تفصیل کے(بقیہ نمبر43صفحہ12پر)

مطابق تھانہ قطب پور کے علاقے میں یکم فروری کو محمد خلیل نامی شخص نے اطلاع دی کہ میرا بھانجا محمد صدیق تین بجے ڈن گھر سے نکلا اور واپس نہ آیا ہے۔جس کے بعد دو فروری کو 15 پولیس کو اطلاع دی گئی۔ کہ محلہ صدیق آباد میں کوڑے کے ڈھیر پر ایک جلی ہوئی نعش پڑی ہے۔پولیس نے موقع پر پہنچ کر کاش کو قبضے میں لیا۔اور محمد خلیل نے لاش کی شناخت کی۔ کہ یہ میرا بھانجا ہے۔پولیس نعش کا پوسٹ مارٹم کروایا گیا۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں مقتول کی موت گلا دبانے سے موت واقع ہونا تحریر ہوئی ہے۔ جس کے نمونے پی ایف ایس اے کو بھجوا کر مقدمہ درج کرلیا گیا۔جس کے بعد سٹی پولیس آفیسر ملتان محمد زبیر دریشک کی ہدایت پر ایس ایس پی انوسٹی گیشن رب نواز تلہ کی زیرِ نگرانی ایس پی کینٹ جاوید خان اور ڈی ایس پی مظفر آباد حیدر حسین کی زیرِ سرپرستی،ایس ایچ او تھانہ قطب پور انسپکٹر ابرار حسین گجر، انسپکٹر فلک شیر، ہیڈ کنسٹیبل محمد اختر، کنسٹیبل ندیم شہزاد اور آئی ٹی کی ٹیم پر مشتمل سپیشل ٹیم کو تشکیل دیا۔جہنوں نے مذکورہ اندھے قتل کو ٹریس کرنے کا خصوصی ٹاسک دیا۔ مقامی پولیس نے شب و روز محنت سے کام کرتے ہوئے ملزمان فیضان ولد نواز قوم بچہ سکنہ لیاقت آباد اور مشرف خان ولد محمود خان قوم لودھی سکنہ نظام آباد ملتان کو گرفتار کرکے انٹیروگیشن کی۔ وجہ عناد پیسوں کا لین دین معلوم ہوا ہے

گرفتار

مزید : ملتان صفحہ آخر