ٹانک،یو محسود کا احتجاجی دھرنا،29 ویں روز میں داخل

    ٹانک،یو محسود کا احتجاجی دھرنا،29 ویں روز میں داخل

  



ٹانک(نمائندہ خصوصی)یومحسود کا احتجاجی دھرنا 29ویں روز میں داخل، ضلعی انتظامیہ کا دھرنا شرکاء سے مذاکرات نہ کرنے کی ہٹ دھرمی برقرار۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ آپریشنوں کے دوران جنوبی وزیرستان کے محسود قبائل کے مکانات کو پہنچنے والے نقصان کے ازالہ کیلئے دئیے جانے والا معاوضہ کی عدم ادائیگی اور بے قاعدگیوں کے خلاف ضلعی انتظامیہ جنوبی وزیرستان کمپاؤنڈ کے سامنے یو محسود کا احتجاجی دھرنا 29روز میں داخل ہوگیا دھرنا سے خطاب کرتے ہوئے شیر پاؤ ایڈوکیٹ، ملک ایاز، شمس محسود ودیگر نے کہا کہ گزشتہ آپریشنوں کے دوران ہمارے مکانا ت کو ناقابل تلافی نقصان پہنچاہے جس کے ازالہ کیلئے حکومت کی جانب سے آٹے میں نمک کے برابر معاوضہ دینے کیلئے ہمارے مکانات کا سروے کرایا گیا ہے جو گزشتہ تین سالوں سے دفتر میں فائلوں کی زینت بن رہے ہیں اور ہمیں مختلف حیلے بہانوں سے ٹرخایا جارہاہے انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں ہم گزشتہ ایک مہینے سے پرامن احتجاج کررہے ہیں لیکن حکومت اور ضلعی انتظامیہ نے تا حال ہمارے اس مسئلے کا کوئی حل نہیں ڈھونڈا جس کے باعث محسود قبائل میں شدید مایوسی اور بے چینی پائی جاتی ہے انکا کہناتھاکہ ملک کے دیگر حصوں میں روڈ حادثات اور دیگر قدرتی آفات کے باعث لوگوں کو پہنچنے والے واقعات کے ازالہ کیلئے بیس سے پچیس لاکھ روپے تک معاوضے فوری طور پر دئیے جاتے ہیں لیکن بدقسمتی سے ملک وقوم کیلئے ہمارے اباواجداد کے بنائے گئے مکانات کو پہنچنے والے نقصان کے ازالہ کیلئے دئیے جانے والے قلیل رقم کیلئے ہمیں خوار وزار کا جارہاہے جس سے محسود قبائل احساس محرومی اور احساس کمتری کا شکارہیں مقررین کا کہناتھاکہ یومحسود قبائل کا احتجاجی دھرنا غیر سیاسی ہے جسمیں کسی قسم کے سیاسی عزائم نہیں ہیں انکا کہناتھاکہ بعض عناصر جرگہ کے متعلق غلط رپورٹ بھیج کر کرپشن اور اپنی سیاہ کاریوں کو چھپانے کی مزموم کوشش کررہے ہیں انہوں نے کہا کہ حالات جیسے بھی کیوں نہ ہوں ہمارا پر امن احتجاجی دھرنا آخری چیک دینے تک جاری رہیگا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر