کرونا وائرس، چین نے جنگلی جانوروں کی تجارت پر مکمل پابندی لگادی

  کرونا وائرس، چین نے جنگلی جانوروں کی تجارت پر مکمل پابندی لگادی

  



بیجنگ (مانیٹرنگ ڈیسک)چین نے کرونا وائرس پھیلنے کا سبب بننے والے جنگلی جانوروں کی تجارت پر مکمل پابندی عائد کردی۔فرانسیسی خبر رساں ایجنسی کے مطابق چین کی اعلیٰ قانون ساز کمیٹی نے چین میں تمام تر وائلڈ لائف کی تجارت اور انہیں بطور خوراک استعمال کرنے پر پابندی عائد کرنے پر غور کیا جس کے بعد ان جانوروں کی خرید و فروخت پر مکمل پابندی عائد کردی گئی، چین میں ان جانوروں کو ہی قاتل کرونا وائرس کے پھیلنے کا اہم سبب قرار دیا جارہا ہے۔چین کی نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، چین کی اعلیٰ قانون ساز کمیٹی نے یہ تجویز حکمران جماعت نیشنل پیپلز کانگریس کی اسٹینڈنگ کمیٹی کو پیش کی تھی جس نے اب اس کی منظوری دیدی ہے۔تجویز میں کہا گیا تھا کہ جنگلی جانوروں کے کھانے پر مکمل طور پابندی عائد اور غیر قانونی جنگلی جانورں کی تجارت پر کریک ڈاؤن کیا جائے۔خیال رہے ماضی میں بھی چین میں جنگلی جانوروں کی تجارت پر عاضی طور پر پابندیاں عائد کی جاتی رہی ہیں۔چینی محکمہ صحت کے حکام نے خدشات ظاہر کیے تھے کہ کرونا وائر س ممکنہ طور پر ووہان کی مارکیٹ سے پھیلا جہاں جنگلی جانوروں کو خوراک کے طور پر فروخت کیا جاتا ہے۔

جانور تجارت پابندی

مزید : علاقائی